karachi safi

کراچی میں وفاقی وزیر علی زیدی کی صفائی مہم شروع

EjazNews

کراچی میں 500ملین گیلن سے زائد گندا پانی روزانہ بغیر کسی ٹریٹمنٹ کے سمندر میں پھینکا جارہا ہے، حالانکہ شہر میں دو سے تین ٹریٹمنٹ پلانٹس موجود ہیں، مگر وہ حکومتی اداروں کی عدم توجہی کی بنا پر عرصہ دراز سے غیر فعال ہیں۔ کراچی میں 2 ندیاں،13 بڑے اور 250کے لگ بھگ چھوٹے برساتی نالے ہیں، جن کے ذریعے شہر بھر کی غلاظت، گٹرکا پانی، ہسپتالوں اور فیکٹریز کا کچرا بلا روک ٹوک سمندر برد ہو رہا ہے۔ درمیان میں کوئی ایسا ٹریٹمنٹ پلانٹ نہیں، جو اس کچرے کو سمندر میں جانے سے روک سکے۔ ہمارے ساحلوں پر قائم دو فعال ترین بندر گاہیں، کراچی پورٹ ٹرسٹ اور بن قاسم پورٹ بھی سمندری آلودگی کو بڑھانے میں اپناحصّہ ڈال رہی ہیں۔ یوں تو کراچی پورٹ ٹرسٹ کے حکام سمندر کو صاف رکھنے کے لیے کوششوں کا دعویٰ کرتے ہیں، مگر حقیقت اس کے برعکس ہے۔ یہ بندرگاہ شاید دنیا کی سب سے آلودہ ترین بندرگاہ ہے، کیونکہ اس کے قرب و جوار میں تیل بہنے کے واقعات عام ہیں۔
اب ساری صورتحال میں وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے صوبائی حکومت کو چیلنج دے چکے ہیں کہ وہ دو ہفتوں میں کراچی کے 6 اضلاع سے کچرا صاف کرکے دکھائیں گے جس کے تحت کراچی صفائی مہم کا آغاز ہوگیا ہے۔پہلے مرحلے میں 14 اگست تک شہر کے 32 بڑے نالے صاف کیے جائیں گے اور بند نالوں کو کھولا جائے گا ۔اس کے بعد شہر سے کچرا اٹھایا جائے گا، سڑکوں اور اہم شاہراؤں پر موجود گندگی کو صاف کیا جائے گا۔

صفائی مہم میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے

کراچی صفائی مہم سے متعلق وفاقی وزیر علی زیدی کا کہنا ہے کہ ابھی سندھ حکومت کو صفائی مہم پر ہونے والے خرچ کا اندازہ نہیں ہے، ایف ڈبلیو او اس کام کی نگرانی کرے گی جس میں منافع کا دخل نہیں ہے۔انہوں نے بتایا کہ لانڈھی انڈسٹریل ایریا کے صنعت کارروں نے علاقہ صاف کرنے کی پیش کش کی ہے۔علی زیدی نے صوبائی سندھ حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ انہیں تو پلاسٹک بیگس پر پابندی لگانی چاہیے کیونکہ سمندر میں جا کر یہ پلاسٹک بیگ تباہی مچاتے ہیں۔
وفاقی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ شہریوں کی حمایت اور شرکت کے بغیر یہ کام ممکن نہیں ہے لہذا اس مہم میں سب کے تعاون کی ضرورت ہے۔علی زیدی کی صفائی مہم کے اقدام کو کرکٹ کھلاڑی، شوبز شخصیات اور شہریوں کی جانب سے خوب سراہا جارہا ہے۔ادھر وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے علی زیدی کی کاوشوں کو شاندار اقدام قرار دیتے ہوئے کہا کہ انہیں خوشی ہے کہ کسی نے تو یہ بیڑہ اٹھایا ہے۔
اب اس مہم میں وفاقی وزیر کتنے کامیاب ہوتے ہیں یہ تو حالات ہی بتائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں:  آرمی چیف کے اقدام کو ویلکم کرتے ہیں:بلاول بھٹو زرداری

اپنا تبصرہ بھیجیں