Dr shahazad akber

شہباز شریف نے برطانوی اخبار کو شکایت کی ہے مقدمہ نہیں کیا:معاون خصوصی شہزاد اکبر

EjazNews

وزیراعظم کے معاون خصوصی شہزاد اکبر نےپریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا اس کرپشن میں شہباز شریف کے داماد کو ایرا کی فنڈنگ کے منصوبے سے براہ راست ادائیگیاں بھی کی گئیں۔ خبر شائع ہونے کے بعد شہباز شریف اور مسلم لیگ(ن) کی ترجمان نے پریس کانفرنسز کیں اور قوم سے وعدہ کیا کہ وہ لندن کی عدالتوں میں ڈیلی میل، وزیراعظم عمران خان اور میرے خلاف قانونی چارہ جوئی کریں گے۔ 25 جولائی کو شہباز شریف نے برطانیہ کی عدالت میں مقدمہ دائر کرنے کا دعویٰ کیا جبکہ لا فرم کی پریس ریلیز میں لکھا ہے کہ پاکستان کے اپوزیشن لیڈر نے سیاست زدہ کیس سے متعلق باضابطہ شکایت کی ہے۔
پریس کانفرنس کرتے ہوئے معاون خصوصی احتساب شہزاد اکبر نے کہا کہ برطانوی اخبار کو 4 صفحات پر مشتمل کی گئی شکایت میں شہباز شریف نے کہا کہ موقف دینے کا موقع نہیں دیا، رپورٹنگ عوام کے مفاد میں نہیں تھی، ان 4 صفحات پر مشتمل شکایت میں شہباز شریف نے خبر میں عائد ایک بھی الزام کو مسترد نہیں کیا۔
وزیراعظم کے معاون خصوصی احتساب نے چیلنج دیا کہ مجھے عدالت میں لے جائیں میں تمام ثبوت پیش کروں گا، شاید وہ ان کے اس دعوے سے ڈر گئے ہیں۔25 جولائی کو ڈیلی میل کے خلاف مقدمے کا نام نہاد دعویٰ کیا گیا جبکہ اصل میں صرف اخبار کو شکایت کی گئی ہے، لہٰذا اگر شہباز شریف سچے ہیں تو عدالت میں جائیں۔ شہباز شریف نے دوسرا دعویٰ کیا تھا کہ شہزاد اکبر کو عدالت میں لے کر جائیں گے کیونکہ بقول شہباز شریف کے ان کے خلاف خبر کروائی گئی، اگر ایسی بات ہے تو میرے خلاف مقدمہ کریں۔ ڈیلی میل کا صحافی آج بھی اپنی خبر پر قائم ہے اور اس کہانی کا کردار آفتاب محمود لاہور جیل میں ہے۔ شہباز شریف میرے خلاف عدالت سے رجوع نہیں کریں گے اور اگر مجھ پر مقدمہ نہیں کریں گے تو میں وعدہ کرتا ہوں کہ میں خود برطانیہ کی عدالت میں جاؤں گا اور شہباز شریف کی کرپشن کے تمام ثبوت پیش کروں گا، اس خبر میں جو ثبوت پیش کیے گئے وہ صرف 5 فیصد ہے باقی 95 فیصد ثبوت میرے پاس ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  تیار ہیں: 6ٹیموں میں سے ایک کے باہر ہونے کا وقت آگیا ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں