hollywood-girls

ہالی وڈ کی شوبز ہستیاں اپنا وزن کیسے کم رکھتی ہیں؟

EjazNews

50-60سال کی عمر میں بھی ہالی وڈ اور بالی وڈ کے اداکارائیں اور اداکار دبلے پتلے اور سمارٹ نظر آتے ہیں۔ سیلبرٹیز کی یہ سمارٹنس نوجوانوں کیلئے ہمیشہ سے باعث کشش رہی ہے۔ کئی اداکاروں سے وہ ان کی سمارٹنز کا راز معلوم کرنے کی کوشش بھی کرتے رہے ہیں آخر کیا وجہ ہے کہ 30-35سال کی عمر میں ہمارے ہاں لوگ وزن بڑھانا شروع کر دیتے ہیں اور جسم بے ڈھول اور بے ڈھنگا ہو جاتا ہے لیکن گلوکارا?ں اور گلو کاروں میں ایسا نہیں ہوتا۔
شیرون اوسپر ایک معروف فنکارہ ہیں اپنی ڈائٹ پر کنٹرول کر کے انہوں نے بھی اپنے وزن پر قابو پا لیا۔ جینٹ پالٹو gwynethبھی اپنی خوراک کے بارے میں بہت محتاط ہیں۔ وہ سویا بین کو گزشتہ 30سالوں سے ہاتھ بھی نہیں لگا رہے۔ لگ بھگ دس سال سے انہوں نے اسے خیر باد کہہ دیا ہے۔ البتہ وہ دودھ خوب پیتے ہیں، سویا اچھی خوراک نہیں ہے یہ بات جینٹ کے ڈاکٹر سائنٹ نے انہیں 10 سال پہلے بتائی تھی تاہم ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ سویا ہر شکل میں بری نہیں ہے۔ اس کا صحیح استعمال انسانی صحت کے لیے ضروری ہے لیکن غلط استعمال موٹاپے کا باعث بنتا ہے۔ جسم کو پروٹین ، ریشے اور ایسی دوسری چیزوں کی ضرورت ہے اسے جیسے بھی پورا کر لیا جائے ٹھیک ہے ان کی کمی نقصان دہ ہے۔ وزن کو قابو میں رکھنے کے لیے ڈاکٹر اوز نے چینی کے استعمال میں محتاط رہنے کی ہدایت دی۔ ڈاکٹر اوز اس کے استعمال میں احتیاط کا مشورہ دیتے ہیں۔
جوناتھن نائٹ نے گوشت سے جان چھڑا کر صرف 7مہینوں میں اپنے وزن میں نمایاں کمی کر لی۔ وہ کہتے ہیں کہ مذبح خانوں میں جانوروں کو ذبح ہوتے دیکھ کر گوشت سے ان کا دل اچاٹ ہو گیا ہے۔ اس کے بعد وہ ویجیٹیرین بن گئے۔ اب ان کا وزن بھی کم ہے اور صحت بھی بہتر ہے۔
سمارٹ سلیبرٹیز کیری انڈر وڈ نے نہایت ہی آسان نسخہ اپنایا۔ انہوں نے بھی اپنی خوراک میں سے گوشت کی چھٹی کر ادی۔ وہ اب ویجیٹرین ہے اور ڈبل روٹی سے انہیں عشق ہے۔ ڈبل روٹیاں کھا کھا کر کیری کا دل بھر گیا تو پچھلے سال ہی اس نے ڈبل روٹی کو بھی اپنی خوراک سے خارج کر دیا۔ اب وہ صبح ناشتے میں صرف oeat meilکا ایک پیالہ کھاتی ہیں۔دوپہر کو ڈبل روٹی اور شام کو پروٹین اور سبزیاں بس اتنا ہی۔ چندمہینوں میں ان کا پیٹ اندر ہوگیا۔
ایل بارٹن نے اپنے ڈاکٹر کے کہنے پر سویٹ اور ساس سے جان چھڑا لی۔ اداکار بارڈ وین کو ڈاکٹروں نے خبردار کیا تھا کہ اگر اس نے چینی کھانا کم نہ کی تو شوگر کا مریض بن جائے گا۔اسے چینی ساس سویٹ اور ساس بہت پسند تھی۔اس کی بیگم دی لیرئیا بارڈ ون اپنی کتاب میں لکھتی ہیں کہ ڈاکٹروں کے مشورے پر اس نے پسندیدہ ساس چھوڑ دی۔معروف سلیبرٹ ٹیرن شیٹ اچھی صحت کے لیے پھلوں کے جوس زیادہ نہیں پیتیں۔انہیں چکن اور پھلیاں پسند ہیں۔پھلوں کے جوس میں چینی بہت زیادہ ہوتی ہے جوس پیتے ہوئے اسے اپنے اندر موٹاپے بڑھتا ہوا محسوس ہوتا ہے چنانچہ انہوں نے یہ چھوڑ دیا۔ تاہم ڈاکٹروں کے مطابق پھلوں کے جوس میں شوگر کی مقدار ہماری عام شوگر سے بہت کم ہوتی ہے۔ یہ بہت کم لوگوں میں موٹاپہ پیدا کرتے ہیں۔ لیکن بہر حال ان کا ایک تناسب ہونا چاہئے۔ ایک اور اداکار ٹیڈ ایلن نے وزن کم کرنے کے لیے عام استعمال ہونے والی خوراک چھوڑ دی۔

یہ بھی پڑھیں:  حلیمہ سلطان تیر نہیں بندوق چلانے کی بھی ماہر ہیں
ہالی ووڈ کے اداکاروں اور اداکارائوں کی سمارٹنس پوری دنیا کو متاثر کرتی ہے

دنیا بھر میں روزانہ کروڑوں روپے کا پیزا کھایا جاتاہے، یہ بہت خوفناک ہے۔ اس کے اجزائے ترکیبی انسانی صحت کے لیے مضر ہیں اس میں کم ترین معیار کی اشیاء استعمال کی جاتی ہیں۔ یہ کہہ کر ٹیڈایلن نے پیزے کا استعمال چھوڑ دیا اب یہ اس کی صحت کا راز ہے۔ TIaMawryنے اچھی صحت کے لیے عام استعمال ہونے والی خوراک چھوڑ دی۔ ہمیں نگرون کا بھی مسئلہ ہے اس لیے خاص قسم کی خوراک کو اپنے سے دور رکھنا ضروری ہے۔ یہ دودھ اور گلوٹین کا استعمال کم سے کم کرتی ہیں۔ وہ زیادہ پروٹین کی خوراک کم سے کم کھاتی ہیں یہ موٹاپے کا باعث بنتی ہیں بقول ٹیا موروی۔
جان گڈمین نے چینی کو خیر باد کہہ کر اپنے وزن میں 100پا?نڈ کی کمی کرلی۔ انہیں پٹیٹو چپس کے رسیا جان گڈ مین کے لیے آلو?ں سے جان چھڑانا نہایت مشکل کام تھا۔ انہیں یہ ناممکن نظر آرہا تھا۔ لیکن کیا کرتے اچھی صحت اور وزن کے لیے انہیں اپنی پسند کی قربانی دینا پڑی۔
ایک اور سلیبرٹری ، ڈیمنیکا میک کیلٹ کہتی ہیں کہ ڈیری پراڈکٹ کے کم سے کم استعمال ان کی اچھی صحت کا راز ہے۔ میں کبھی جیلٹین نہیں کھاتی اور نہ ہی دودھ یا مکھن کو ہاتھ لگایا ہے۔ چینی کے بھی قریب بھی نہیں بھٹکتی۔ میں تو صرف پانی پیتی ہوں۔ البتہ بہت اچھی اور صاف ستھری خوراک کھاتی ہوں۔
ویسٹی ایلے 68سال کی ہو چکی ہیں لیکن اس عمر میں بھی وہ بہت فٹ ہیں۔ وہ کہتی ہیں کہ میں جب بھی چیز کھاتی ہوں تو مجھے بھوک لگنے لگتی ہے۔ چنانچہ میں نے چیز کھانا چھوڑ دی، جس سے وزن بھی قابو میں آگیا۔ ورنہ بھوک کی وجہ سے میں کھاتی رہتی تھی اور جس سے موٹاپا پیدا ہوتا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  میوزک انڈسٹری میں سجاد علی کے بعد ان کے بیٹے کی آمد،نئے گانے میں متعارف

اپنا تبصرہ بھیجیں