shahid khaqan abasi

سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی گرفتار پر ن لیگی اور حکومتی رد عمل

EjazNews

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی مسلم لیگ (ن) کے صدر شہبازشریف کی پریس کانفرنس میں شرکت کے لیے احسن اقبال کے ساتھ لاہور جارہے تھے، نیب نے سابق وزیراعظم کو لاہور کے ٹول پلازہ ٹھوکر نیاز بیگ پر روک کر گرفتار کر لیا یہی پر نیب لاہور کا آفس بھی ہے۔نیب نے اپنے اعلامیے میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی ایل این جی کیس میں گرفتاری کی تصدیق کی ہے۔چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے ان کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے۔ ذرائع کا کہنا ہے شاہد خاقان عباسی کو نیب میں طلب کیا گیا تھا جس پر ان کا کہنا تھا وہ لاہور میں نہیں آسکتے ، ان کی لوکیشن ٹریس کر کے انہیں گرفتار کیا گیا۔شاہد خاقان عباسی کو نیب لاہور کے دفتر میں رکھا گیاہے اور انہیں کل ریمانڈ کے لیے عدالت میں پیش کیے جانے کا امکان ہے۔
دوسری جانب مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کی مذمت کرتے ہوئے اسے سیاسی انتقام قرار دیا ہے۔
کچھ خبریں ایسی بھی گردش کر رہی ہیں کہ سابق مشیر خزانہ مفتاح اسماعیل اور سابق منیجنگ ڈائریکٹر پی ایس او عمران الحق کو بھی آئندہ 24 سے 48 گھنٹوں میں گرفتار کیے جانے کا امکان ہے۔
واضح رہے کہ شاہد خاقان عباسی نے مسلم لیگ (ن) کے سابق دور حکومت میں بحیثیت وزیر پیٹرولیم قطر سے ایل این جی کا معاہدہ کیا تھا اور 220 ارب روپے کا ٹھیکہ دیا تھا۔شاہد خاقان عباسی پر الزام ہے کہ وہ اس ٹھیکے میں خود بھی حصہ دار ہیں، اس سلسلے میں نیب کی سفارش پر ان کا نام ای سی ایل میں بھی شامل ہے، شاہد خاقان عباسی نے کسی عدالت سے ضمانت قبل از گرفتاری حاصل نہیں کی تھی۔
وزیر ریلوے شیخ رشید بھی شاہد خاقان عباسی کے خلاف ایل این جی درآمد کا کیس سپریم کورٹ لے کر گئے تھے۔
شاہد خاقان عباسی مسلم (ن) کے دورحکومت میں پہلے وزیر پیٹرولیم رہے اور پاناما کیس میں میاں نوازشریف کی نااہلی کے بعد انہیں وزیراعظم بنایا گیا۔

یہ بھی پڑھیں:  HBL-PSL2020کی دنیا بھر میں کوریج ایس این ٹی وی کرے گا:پی سی بی

شہباز شریف کہتے ہیں
مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے سیاسی انتقام قرار دیا ہے۔
وفاقی وزیر داخلہ اعجاز احمد شاہ کا بیان بھی اس موقع پر سامنے آیا جس کے مطابق ان کا کہنا تھا کہ ملک کسی ایک کا نہیں ہے ملک سب کا ہے کسی نے کچھ کیا ہوگا جب ہی تو گرفتاری کی گئی ہے۔
فردوس عاشق اعوان کہتی ہیں
وزیراعظم کی معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ شاہد خاقان عباسی کو کن الزامات کے تحت گرفتار کیا گیا وہ نیب ہی بتا سکتی ہے، شاہد خاقان کو مسلسل نیب دفتر بلایا گیا لیکن وہ پیش نہ ہوئے۔ان کا کہنا تھا کہ انہیں بھی اطلاع میڈیا کے ذریعے ملی۔نیب کے پاس وارنٹ گرفتاری ہوگا اسی لیے انہوں نے انہیں گرفتار کیا۔
ان کا کہنا تھا کہ قانون کی حکمرانی یقینی بنانا حکومت کا فرض ہے۔ حکومت میں کسی نے اختیارات کا غلط استعمال یاکرپشن کی ہو تو ضرور گرفتاری ہونی چاہیے، یہ نیا پاکستان ہے، یہاں اب ادارے خواہشات کے تابع نہیں ہیں، قانون کےتابع ہیں۔ ہم اداروں کو مضبوط اور بااختیار بنانا چاہتاہے۔
مریم نواز کہتی ہیں
ن لیگ کی نائب صدر مریم نواز نے سوشل میڈیا پر شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کی ویڈیو شیئر کرتے ہوئے پاکستانی عوام کے نام اپنے پیغام میں لکھا کہ آپ کے ووٹ سے منتخب ہونے والا ایک اور وزیراعظم گرفتار ہو گیا۔مریم نواز نے مزید لکھا کہ جو عوام کے ووٹ سے آئے گا تو کیا یہی لاقانونیت، توہین اور ناانصافی اس کا مقدر بنے گی۔نیب کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ آپ کا منتخب نمائندہ نیب جیسے بدنام ادارے کی ایک فوٹو کاپی کی مار ہے۔
احسن اقبال کی میڈیا سے گفتگو
میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے سیکرٹری احسن اقبال نے کہا کہ آج پاکستان میں جمہوریت کے لیے ایک اور سیاہ دن ہے، عوام کے ووٹوں سے منتخب ہونے والے ایک اور وزیراعظم کو نیب گردی اور پسپائی گردی کا نشانہ بنایا گیا ہے۔ن لیگ کے سیکرٹری جنرل نے کہا میں نے اسمبلی میں بھی کہا تھا کہ پاکستان کی 72 سالہ تاریخ میں کوئی ایسی حکومت نہیں آئی جس کو ملکی اداروں کی جانب سے ایسی ٹھنڈی ہوا ملی ہو لیکن اس کے باوجود یہ حکومت اڑ نہیں پا رہی۔احسن اقبال نے کہا کہ اگر اس حکومت کا جہاز نہیں اڑ پا رہا تو اس میں ہمارا کیا قصور ہے، اصل بات یہ ہے کہ کپتان ناتجربہ کار، نالائق ہے جس کی سزا اپوزیشن اور ملک کے 20 کروڑ عوام کو دی جا رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کے لیے پیغام ہے کہ ہم سب کو پکڑ کر جیل میں ڈال دو لیکن پھر بھی ہم تمھارے ان اوچھے ہتھکنڈوں سے ڈرنے والے نہیں ہیں کیونکہ ہم نے مشرف کی وردی کا بھی مقابلہ کیا ہے اور دہشت گردوں کی گولیاں بھی کھائی ہیں۔
وزیر ریلوے شیخ رشید نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو شخص جتنا چیخ رہا ہے اس کا کیس اتنا ہی بڑا ہے، آسان نسخہ بتا دیا ہے جو زیادہ چیخ رہا ہے اس کی اگلی باری ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستان بھارت سے مطالبہ کرتا ہے کہ مقبوضہ کشمیر سے اپنا غیرقانونی قبضہ فوری ختم کرے:ترجمان دفتر خارجہ

اپنا تبصرہ بھیجیں