eng vs aus

انگلینڈ فائنل میں پہنچ گیا، نیوزی لینڈ کے ساتھ فائنل کھیلے گا

EjazNews

ایجسٹن میں کھیلے جانے والے سیمی فائنل میں آسٹریلیانے 223رنز بنا ئی یوں انگلیش ٹیم آسٹریلیا کو کم ترین سکور کی سطح پر رکھنے میں کامیاب رہی۔ آسٹریلیا نے بیٹنگ شروع کی تو یکے بعد دیگر دو وکٹیں گرنے سے ٹیم پریشر میں آگئی ،جس کا فائدہ انگلش ٹیم نے خوب اٹھایا۔سمتھ اور کیری کی ذمہ دارانہ بیٹنگ نے ٹیم کو سہارا دیا۔لیکن انگلش بائولرز تھے کہ انہوں نے آسٹریلوی ٹیم کو مسلسل پریشر میں ہی رکھا۔آسٹریلیا کی ٹیم کا ابتدائی ہی اچھا نہ تھا یہ ایسا ہی تھا جیسے گزشتہ روز انڈین ٹیم کے ساتھ ہوا تھا۔ آسٹریلیا کی جانب سے ڈیوڈ وارنر9، ایرون فنچ صفر، اسٹیون اسمتھ85، ہیڈ سکوپ4، ایلکس کیری 46، مارکس اسٹوئنس صفر، گلین میکسویل 22، پیٹ کمنز6، مچل اسٹارک29، جیسن بہرن ڈروف1، نیتھن کاؤلٹر نائیل۔ یوں آسٹریلیا کی ٹیم 223رنز بنا کر انگلینڈ کو 224 رنز کا ہدف دے پائی۔ جہاں تک آسٹریلیوی ٹیم کو دیکھا جائے تو یہ ایک منجھی ہوئی اور پر اعتماد ٹیم ہے لیکن سیمی فائنل کا بھی اپنا ہی پریشر ہوتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  کیسے کیسے میرے ملک کو لوٹا جارہا ہے

دوسری جانب انگلش بیٹسمینوں نے کھیل کا آغاز بڑے شاندار طریقے سے کیا ،اور جس طرح انگلش بائولرز نے آسٹریلوی ٹیم کو پریشر میں رکھا اُسی طرح انگلش بیٹس مین بھی آسٹریلوی بائولرز کو پریشر میں رکھنے میں کامیاب ہو گئے۔ جیسن روئے اور جونی بیئراسٹوکی جوڑی نے شاندار اننگز کھیلی اور ٹیم کو جتوانے میں کلیدی کردار ادا کیا۔ جیسن رائے 85سکور بنا کر کیچ آئوٹ ہوئے جبکہ اسٹو 34 رنز بنا کر ایل بی ڈبلیو ہوئے۔ جو روٹ اور اوئن مورگننے بھی ذمہ داری کا مظاہر ہ کیا

انگلش ٹیم نے سیمی فائنل تک پہنچنے سے پہلے اپنے 9میچوں میں سے 6جیتے اور 3ہارے ہیں۔اس دفعہ انگلینڈ 12ویں ورلڈ کپ کا سیمی فائنل کھیلے گی۔ یہ بات ذہن نشین کرنے والی ہے کہ اب تک کھیلے جانے والے 11ورلڈ کپوں میں سے انگلینڈ آج تک کوئی ورلڈ ٹرافی اپنے نام نہیں کر سکا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں