imran khan

ایمنسٹی سکیم کا فائدہ اٹھائیں، ملک کو اس مشکل وقت نکالیں: وزیراعظم عمران خان

EjazNews

وزیراعظم عمران خان نے قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک کا قرضہ پچھلے 10سال میں 6ہزار ارب سے 30ہزار ارب پہ چلا گیا ہے ہم نے پچھلے سال جتنا ٹیکس جمع کیا اس کا آدھا قرضوں کے سود ادا کرنے میں چلا گیا ۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ قرضوں کی دلد ل میں پھنسے ہوئے ہیں۔مطلب یہ ہے کہ آج ہم قرضے لے رہے ہیں ان قرضوں کے سود کی ادائیگی کے لیے ہم یہاں کیوں پہنچے ہیں کرپشن اور ٹیکس کی چوری کی وجہ سے۔ اب آپ کو کرپشن کی فکر تو نہیں کرنی چاہیے کیونکہ اس کو تو اب ہم چھوڑیں گے۔ میں آپ کیلئے ایک سکیم لے کر آیا ہو ں جو 30جون تک ہے۔اس سکیم سے آپ کو موقع ملتا ہے جو پیسہ ،ڈالر ، سونا گھر میں رکھا ہوا ہے،باہر اثاثے ہیں ، بے نامی اثاثے ہیںآپ اسے ظاہر کر سکتے ہیں اور یہ سنہری موقع ہے۔ قوم جب تک مل کر فیصلہ نہیں کرے گی تب تک ہم اس قرضوں کی دلدل سے نہیں نکل سکتے۔ شوکت خانم میں تو میں نے دیکھا ہی ہوا ہے میری قوم پہلے سے زیادہ پیسہ دیتی ہے لیکن 2005میں زلزلہ آیا میں نے اپنی قوم کو ایکشن میں دیکھا۔ 2010ء میں جب سیلاب آئے تو اربوں اربوں ڈالر کا نقصان ہوا تھا لیکن جدھر جدھر پاکستانی تھے سب نے اپنا حصہ ڈالا۔ اس مشکل سے بھی ہم آرام سے نکل سکتے ہیں۔ہم نے اگلے سال ساڑھے پانچ ہزار ارب روپیہ اکٹھا کرنا ہے۔ اگر قوم فیصلہ کر لے تو ہم آٹھ ہزار ارب روپے اکٹھے کر سکتے ہیں۔ ہم آزاد ہو جاتے ہیں ہم اپنے پیروں پر کھڑے ہو جاتے ہیں۔ہم اپنے لوگوں کو غربت سے نکال سکتے ہیں ہم اپنے بچوں کا مستقبل ٹھیک کر سکتے ہیں۔ مجھے اس کے لیے آپ کی ضرورت ہے۔ ایف بی آر کے پاس سار ا ڈیٹا موجود ہ اگر آپ ایف بی آر کی معلومات اس کی ویب سائٹ سے پتہ کرسکتے ہیں۔میں نہیں چاہتا آپ کسی مشکل میں آئیں اور اس ملک کو اس مشکل سے نکالیں۔

یہ بھی پڑھیں:  آئینی ترمیم کرنی ہے تو یہ پارلیمان کا کام ہے، سپریم کورٹ صرف اس کی تشریح کرسکتی ہے:مریم نواز

اپنا تبصرہ بھیجیں