cantonment board_1

ملک بھر کے 41 کنٹونمنٹ بورڈز میں کانٹے کا مقابلہ ہوا،پی ٹی آئی نے میدان مار لیا

EjazNews

کنٹونمنٹ بورڈز میں پولنگ کا عمل صبح 8 بجے شروع ہوا جو شام 5 بجے تک جاری رہا، پولنگ اسٹیشنوں پر امن وامان کی صورتحال برقرار رکھنے کیلئے پولیس اور رینجرز اہلکار تعینات تھے۔

انتخابات میں خیبرپختونخوا اور بلوچستان میں تحریک انصاف جبکہ پنجاب میں مسلم لیگ (ن) کامیابی سے ہمکنار ہوئی۔

کراچی میں پی ٹی آئی 14،پی پی پی 11، جماعت اسلامی 5 جبکہ ایم کیو ایم اور مسلم لیگ (ن)کے تین تین امیداور کامیاب ہوئے۔ حیدرآباد کی 7نشستوں پر ایم کیو ایم نشست حاصل کرنے میں کامیاب رہی۔

کوئٹہ، بہاولپور، جہلم، گوجرانوالہ اور کھاریاں میں تحریک انصاف جبکہ لاہور ، راولپنڈی اور سیالکوٹ میں ن لیگ کے امیدوار بھاری اکثریت سے کامیاب ہوئے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کراچی میں پولیس نے 2جعلی پولنگ ایجنٹس کو بھی گرفتار کرلیاہے۔خیبرپختونخوا کے 37وارڈز میں سے تحریک انصاف 18، آزاد 9، مسلم لیگ (ن) ً5، پاکستان پیپلزپارٹی کے امیدوار 3نشستوں پر کامیاب رہے۔

اپوزیشن جماعتوں میں مسلم لیگ ن 44 نشستوں کے ساتھ سب سے آگے ہے جبکہ آزاد امیدوار 31 نشستوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک انصاف 27 نشستوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  میرا اصل ویژن ہے پاکستان ایک فلاحی ریاست بنے:وزیراعظم عمران خان

واہ کینٹ میں مسلم لیگ ن نے 10 میں سے 8 نشستیں جیت کر تحریک انصاف کو بڑا دھچکا پہنچایا۔وہیں گوجرانوالا میں تحریک انصاف نے 10 میں سے 6 نشستیں جیت کر مسلم لیگ (ن) کو مات دی، اس کے علاوہ بہاولپور، جہلم اور کھاریاں میں تحریک انصاف نے میدان مار لیا۔ملتان کینٹ کی 10 میں سے 9 نشستیں آزاد امیدوار لے اُڑے۔

اگر تفصیلات کی جانب جایا جائے تو غیر سرکاری اور غیر حتمی نتائج کے مطابق وارڈ 1سے (ن)لیگ کے علی حسن عباس 1312ووٹ لیکر کامیاب قرار پائے ان کے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوارصابرحفیظ بٹ کو 189ووٹ ملے۔ وارڈ 2 سے مسلم لیگ (ن)کے رضوان شفقت 5033ووٹ لیکر کامیاب قرارپائے ان کے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوار محمد عظیم کو 2842 ووٹ ملے۔ وارڈ نمبر 3سے پی ٹی آئی کے رشید احمد 2629ووٹ لیکر کامیاب ہوئے مدمقابل لیاقت علی 1751ووٹ لے سکے۔ وارڈ 4سے مسلم لیگ(ن) کے امیدوار آصف علی 1595ووٹ لیکر کامیاب ہوئے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوار شہزاد حسین کو 1379ووٹ ملے۔ وارڈ نمبر 5سے آزادامیدوار اکبر علی559ووٹ لیکر کامیاب ہوئے ان کے مدمقابل میجرریٹائرڈ عرفان اکبر 389ووٹ حاصل کرسکے۔ وارڈ نمبر 6سے پی ٹی آئی کے عمر اکبر 2150ووٹ لیکر کامیاب ہوئے مدمقابل شہباز علی کو2029ووٹ ملے۔ وارڈ 7سے مسلم لیگ (ن)کے میاں بابراشرف 2632ووٹ لیکر کامیاب قرارپائے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوار محمد امتیاز نے 2226ووٹ حاصل کیے۔ وارڈ8سے مسلم لیگ (ن )کے نعیم شہزاد3930لیکر پہلے جبکہ پی ٹی آئی اے رانا شاہ جہان 1472ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔ وارڈ9سے پی ٹی آئی کے محمد وقاص اسلم 3508ووٹ لیکر کامیاب قرار پائے ان کے مدمقابل مسلم لیگ ن کے امیدوار اسد ایوب کو3342ووٹ ملے۔ کینٹ کی وارڈ 10سے بھی مسلم لیگ (ن)کے محمد جعفر فاتح قرار پائے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوار حافظ محمد ابرارکو 2628ووٹ ملے ۔ والٹن کنٹونمنٹ کی وارڈ 1سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوار اشفاق احمدچودھری 4096ووٹ لیکر کامیاب قرارپائے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوار وحید ستار کو 2789ووٹ ملے ۔ وارڈ2سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوار چودھری محمد حنیف4331 ووٹ لیکر کامیاب ہوئے ان کے مدمقابل پیپلز پارٹی کے طارق صدیقی نے 3954ووٹ حاصل کیے۔ وارڈ3سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوارچودھری محمدشریف5470 ووٹ لیکر کامیاب ہوئے مدمقابل پی ٹی آئی کے سعود بھٹی کو4753ووٹ ملے۔ وارڈ 4سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوار فقیر حسین1877ووٹ لیکر کامیاب ہوئے مدمقابل پی ٹی آئی کے محمد اسلم بٹ کو1850ووٹ ملے۔ وارڈ5سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوار راجہ نور سبحانی 1850ووٹ لیکر کامیاب قرار پائے ، پی ٹی آئی کے امیدوار جاوید ضمیرکو 1838ووٹ ملے۔ وارڈ 6سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوار نعمان نعیم 4373ووٹ لیکر فاتح قرارپائے مدمقابل پی ٹی آئی کے امیدوار بشارت علی کو2604ووٹ ملے۔وارڈ نمبر7کے انتخابات امیدوار کے انتقال کے باعث ملتوی ہوئے۔ وار ڈنمبر 8سے مسلم لیگ (ن)کے امیدوار محمد عشارب سوہل 4249ووٹ لیکرکامیاب قرار پائے مد مقابل پی ٹی آئی کے امیدوار چودھری محمد شاہد اقبال کو 2151ووٹ ملے۔ وارڈ نمبر 9 میں مسلم لیگ ن کے امیدوار کرامت علی 5058 ووٹ لیکر کامیاب ہوئے، تحریک انصاف کے امیدوار عظمت اللہ وڑائچ 2157ووٹ لیکر دوسرے نمبر پررہے۔ وارڈ نمبر 10 میں مسلم لیگ ن کے امیدوار منیر حسین 5973ووٹ حاصل کرکے کامیاب قرارجبکہ تحریک انصاف کے امیدوار حافظ محمد سفیان 2490 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

یہ بھی پڑھیں:  مریم نواز19جولائی کو عدالت میں طلب

اپنا تبصرہ بھیجیں