Imran_khan_india

نازیوں سے متاثر بی جے پی سرکار کے ہاتھوں بھارت کے سفاکیت پر گرنے کی ایک اور شرمناک مثال ہے:وزیراعظم

EjazNews

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پہلے محترم ترین اور بااصول کشمیری رہنماؤں میں سے ایک 92 سالہ سید علی گیلانی کا جسدِ خاکی چھیننا اور پھر ان کے اہلِ خانہ کے خلاف مقدمہ قائم کرنا نازیوں سے متاثر آر ایس ایس-بی جے پی سرکار کے ہاتھوں بھارت کے سفاکیت پر گرنے کی ایک اور شرمناک مثال ہے۔
مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر وزیراعظم نے اپنی ٹوئٹ کے ساتھ بھارتی اخبار ٹائمز آف انڈیا کی خبر بھی شیئر کی۔

مقبوضہ کشمیر کی پولیس نے مرحوم حریت رہنما سید علی گیلانی کی میت کو پاکستانی پرچم سے ڈھکنے اور بھارت مخالف نعرے بازی پر ان کے اہلِ خانہ کے خلاف مقدمہ درج کردیا۔

رپورٹ میں ایک پولیس افسر کے حوالے سے بتایا گیا کہ میت پر پاکستانی پرچم ڈھکنے اور بھارت مخالف نعرے لگانے پر بڈگام پولیس اسٹیشن میں سید علی گیلانی کے اہلِ خانہ اور دیگر کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستان افغانستان اور ازبکستان ریلوے منصوبے سے خطے میں انقلاب آئے گا:وزیراعظم

خیال رہے کہ معروف کشمیری حریت رہنما اور جدوجہد آزادی کشمیر کے اہم ستون سید علی گیلانی یکم ستمبر 92 سال کی عمر میں مقبوضہ کشمیر کے علاقے حیدرپورہ میں اپنی رہائش گاہ پر طویل علالت کے باعث انتقال کر گئے تھے۔

سید علی گیلانی کے اہلِخانہ کے مطابق پولیس نے ان کی میت چھین کر خاموشی سے تدفین کردی۔اس حوالے سے سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو میں ان کی میت کو پاکستانی پرچم میں لپٹے دیکھا گیا تھا۔

ان کے انتقال کے بعد بھارتی فوج نے کریک ڈاؤن کرتے ہوئے ان کے گھر جانے والے راستوں پر باڑ لگا دی اور سیکڑوں سیکیورٹی اہلکاروں کو تعینات کردیا گیا جبکہ میڈیا رپورٹ کے مطابق کرفیو لگانے کے ساتھ ساتھ انٹرنیٹ سروس بھی معطل کردی گئی تھیں۔

واضح رہے کہ سید علی گیلانی کشمیر کی آزادی کی سب سے توانا آواز تھے اور بھارت سے آزادی کا مؤقف نہایت بہادری سے دہراتے تھے اور انہوں نے وصیت کی تھی کہ انہیں سری نگر کے شہدا قبرستان میں دفنایا جائے لیکن بھارتی حکام نے اس کی اجازت نہیں دی تھی۔

یہ بھی پڑھیں:  کیا ڈونلڈ ٹرمپ بغاوت کےمرتکب قرار دئیے جا سکتے ہیں؟

ان کے انتقال پر حکومت پاکستان کی جانب سے ایک روزہ قومی سوگ اور اس دوران پرچم سرنگوں رکھنے کا اعلان کیا تھا جبکہ گزشتہ برس انہیں پاکستان کے سب سے بڑے شہری اعزاز نشانِ امتیاز سے بھی نوازا گیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں