افغان کرکٹ اپنے شیڈول کے مطابق جاری رہے گی،Shpageeza لیگ بھی ستمبر میں شیڈول

EjazNews

Shpageeza کرکٹ لیگ کی تاریخ میں پہلی بار ٹورنامنٹ میں چھ کے بجائے آٹھ فرنچائزز شامل ہوں گی۔ تمام آٹھ فرنچائزز کے مالکانہ حقوق کابل میں افغانستان کرکٹ بورڈ کے ہیڈ آفس میں منعقدہ ایک تقریب کے دوران فروخت کیے گئے۔ ہندوکش سٹارز اور پامیر زلمیان اس سال لیگ میں شامل ہونے والی دو نئی فرنچائزز تھیں۔

اے سی بی کے سی ای او ڈاکٹر حامد شنواری نے کہا کہ دو نئی فرنچائزز کا شپاگیزا کرکٹ لیگ میں شامل ہونا درست سمت میں ایک قدم ہے اور انہوں نے سرمایہ کاروں اور فرنچائز مالکان کی شراکت کا شکریہ ادا کیا۔ شنواری نے ملک میں کرکٹ کی مزید ترقی میں کاروباری برادری کے کردار کو اہم قرار دیا۔ انہوں نے مزید کہا ، اس بار ، ایس سی ایل سامعین اور شائقین کو ایک نیا تجربہ فراہم کرے گا۔ یہ کھلاڑیوں کے لیے مالی طور پر بھی بہت اچھا ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں:  نئے چیف سلیکٹر ز کی تقرری ہو گئی
afghan_cricket
افغان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین فرنچائز مالکان کے ہمراہ

شنواری نے قومی ٹیم کی آئندہ سیریز کے ساتھ ساتھ اگلے ماہ قومی انڈر 19 ٹیم کے آئندہ میچوں پر بھی ریمارکس دئیے۔ انہوں نے اے سی بی کے چیئرمین فرحان یوسف زئی کا اے سی بی میں مثبت انتظامی اصلاحات لانے کے لیے ان کی مسلسل کوششوں کا شکریہ بھی ادا کیا۔

شپگیزا کرکٹ لیگ کا آٹھویں ایڈیشن 10 ستمبر سے کابل کرکٹ سٹیڈیم میں شروع ہونا ہے اور اسی ماہ کی 25 تاریخ کو اختتام پذیر ہوگا۔

اس کے علاوہ افغانستان کی سری لنکا میں پاکستان اور سری لنکا کے خلاف ون ڈے اور ٹی ٹونٹی سیریز ستمبر میں شیڈول ہے۔

سیریز کے بعد ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ میں شرکت کے لیے افغان ٹیم نے متحدہ عرب امارات (یو اے ای) بھی جانا ہے۔

افغان کرکٹ آفیشل کےمطابق طالبان نے کہا ہے کہ وہ افغان قومی کرکٹ ٹیم کے معاملات میں مداخلت نہیں کریں گے۔
انہوں نے کہا ہے کہ ٹی 20 لیگ کو بھی نہیں روکا جائے گا۔

کرکٹ افغانستان کا سب سےمقبول کھیل ہے اور حالیہ عرصے میں کھیلوں کے میدان میں بڑی کامیابی کے طور پر سامنے آیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  یونس خان بطور بیٹنگ کوچ ورلڈ کپ2022ءتک ذمہ داریاں نبھائیں گے

اپنا تبصرہ بھیجیں