Tahir_Ashrafi

8سالہ بچے پر توہین رسالتؐ کامقدمہ درج نہیں ہوا، برطانوی اخبار کی خبر غلط ہے:طاہر اشرفی

EjazNews

وزیر اعظم کے نمائندہ خصوصی برائے بین المذاہب ہم آہنگی و مشرق وسطیٰ اور چیئرمین پاکستان علماء کونسل حافظ طاہر محمود اشرفی نے کہاہے کہ رحیم یا ر خان میں 8 سا لہ بچے پر توہین نا موس رسا لت ؐکا مقدمہ درج نہیں ہوا تھا-

توہین مقدس مقام اور تو ہین نا موس رسا لتؐ میں بہت بڑا فر ق ہے۔ بچے پر مقد مہ درج کر نیو الے پو لیس ملازمین اور مند رپر حملہ کر نے والے کے خلاف قا نونی ایکشن لیا گیا ہے 73 افراد گر فتار ہیں۔

برطانوی اخبار گا رڈ ین نے درست خبر شا ئع نہیں کی ہے۔ اپنے بیان میں طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ رحیم یا ر خان صاد ق آ باد میں 8سا لہ بچے پر توہین نا موس رسا لتؐ کا مقدمہ درج نہیں ہواہے ۔توہین مقدس مقام کا پر چہ درج کیا گیا جو کہ نہیں ہو نا چا ہے تھا-

یہ بھی پڑھیں:  گرفتارخواتین سے نازیبا حرکات :تھانہ شادباغ لاہور کا سب انسپکٹر گرفتار

اس طرح کے مقدمہ کا اندراج پا کستا ن کی بد نا می کا سبب بنتا ہے۔جن پولیس ملازمین اور دیگرافراد نے یہ پر چہ درج کروایا اور مندر پر حملہ کیاان کے خلاف قا نو نی ایکشن لیا گیاہے اور اب تک اس معا ملہ میں 73افرادگرفتا رہوچکے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ملک بھرکے علماء و مشائخ نے اس واقعہ کی مذمت کی ہے اور مجر موں کو سزا دینے کا مطا لبہ کیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں