Pak_vs_wi

پاکستان اور ویسٹ انڈیز کی سیریز بارش کی نظرہو گئی

EjazNews

سیریز شیڈول کرتے وقت اگر موسمی حالات کو بھی دیکھ لیا جائے تو کیا ہی بہتر ہو گا۔ اب دنیا اس قدر ایڈوانس ہو چکی ہے کہ سال پہلے ٹیکنالوجی بتا دیتی ہے کہ کب کہاں بارش ہونی ہے اور اندازے عموماً ٹھیک ہوتے ہیں۔
اگر کسی بھی سیریز کو شیڈول کرتے وقت موسمی حالات کو بھی مدنظر رکھا جائے تو کھیل کا مزہ خراب نہیں ہوتا۔

پاکستان اور ویسٹ انڈیز کی سیریز بھی بارش ہی کی نظر ہو گئی یہ کہنا میرا غلط نہ ہو گا۔

گیانا میں شیڈول آخری ٹی ٹونٹی میچ میں بابر اعظم نے ٹاس جیت کر میزبان ویسٹ انڈیز کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی تھی۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے کرس گیل اور آندرے فلیچر نے بغیر کسی نقصان کے ابتدائی 3 اوورز میں 30 رنز بنائے تھے کہ بارش کے باعث امپائرز نے میچ روکنے کا حکم دیا۔
اس دوران کرس گیل نے 6 گیندوں پر 12 اور آندرے فلیچر نے 12 گیندوں پر 17 رنز بنائے تھے۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستانی ٹیم کا کوئینز ٹاﺅن میں ٹریننگ سیشن شروع

پاکستان کی جانب سے محمد حفیظ، حسن علی اور محمد وسیم نے باولنگ کروائی لیکن حریف ٹیم کو نقصان پہنچانے میں ناکام رہے۔

میچ انتظامیہ کی جانب سے کھیل کو 9 اوورز فی اننگز تک محدود کرنے کا اعلان کیا لیکن مسلسل بارش کے باعث وکٹ سے کورز نہیں ہٹائے گئے۔
امپائرز نے آخر کار میچ ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

میچ شروع ہونے سے پہلے بابر اعظم کا کہناتھا کہ اس میچ میں ہم پر کوئی دباو نہیں اور موسم کے باعث پہلے فیلڈنگ کرنا زیادہ بہتر ہے اور ہم میچ جیتنے کے لیے اچھا کھیلنے کی کوشش کریں گے۔

دونوں ٹیموں کے درمیان سیریز کا پہلا میچ بھی بارش کی نذر ہوگیا تھا اور بغیر کسی نتیجے کے ختم ہوگیا تھا۔

پاکستان نے دوسرے میچ میں 7 رنز سے کامیابی حاصل کرکے سیریز میں 0-1 کی برتری حاصل کرلی تھی اور آج کا میچ سیریز میں کامیابی حاصل کرنے کے لیے اہمیت اختیار کر گیا تھا لیکن بارش کے باعث یہ میچ نتیجہ خیز ثابت نہ ہوسکا۔
پاکستان نے تیسرے میچ کے لیے ٹیم میں ایک تبدیلی کرتے ہوئے فاسٹ باولر شاہین شاہ آفریدی کی جگہ حارث روف اور ویسٹ انڈیز نے آندرے رسل کو موقع دیا تھا تاہم بارش کی وجہ سے میچ بے نتیجہ ختم ہوا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  کرکٹ بورڈ نے انگلینڈ اور ویسٹ انڈیز کیلئے سکواڈز کا اعلان کر دیا

دونوں ٹیمیں ان کھلاڑیوں پر مشتمل تھیں۔
ویسٹ انڈیز: کیرن پولارڈ(کپتان)، آندرے فلیچر، کرس گیل، شیمرون ہٹمائر، نکولس پوران، آندرے رسل، جیسن ہولڈر، ڈیوین براوو، ہیڈن واش، عقیل حسین، روماریو شیفرڈ
پاکستان: بابر اعظم(کپتان)، محمد رضوان، شرجیل خان، فخر زمان، محمد حفیظ، صہیب مقصود، شاداب خان، حسن علی، محمد وسیم جونیئر، عثمان قادر، حارث روف

اپنا تبصرہ بھیجیں