Raj_kundra1

میڈیا ٹرائل بند کیا جائے

EjazNews

شلپا شیٹی کے شوہر کو گزشتہ ماہ 19 جولائی کو پورن فلمیں بنانے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا جو تاحال جیل میں ہیں اور ان کے خلاف معاملے کی تفتیش جاری ہے۔

شوہر کی گرفتاری اور معاملے کی تفتیش کے دوران میڈیا میں اپنے خلاف جھوٹی اور من گھڑت خبریں شائع ہونے پر اب پہلی بار شلپا شیٹی نے خاموشی توڑتے ہوئے خبروں کو اپنے خلاف میڈیا ٹرائل قرار دیا ہے۔

اداکارہ نے اپنی سوشل میڈیا پوسٹس میں لوگوں سے اور میڈیا سے اپیل کی کہ ان کا ٹرائل بند کرکے ان کی پرائیویسی اور خاندانی زندگی کا خیال رکھا جائے۔

شلپا شیٹی نے اپنی پوسٹ میں لکھا کہ گزشتہ چند دن سے ان کے خاندان نے بہت مشکلات دیکھیں اور میڈیا میں ان کے حوالے سے غیر حقیقی خبریں شائع کرنے کا سلسلہ جاری ہے، جس سے ان کی گھریلو زندگی متاثر ہو رہی ہے۔

Raj_kundra
شلپا شیٹھی اور راج کندرا کی ٹویٹر سے لی گئی ایک تصویر

اداکارہ نے بتایا کہ انہیں ممبئی پولیس اور بھارتی عدالتی نظام پر پورا یقین ہے اور وہ معاملے کی مکمل تفتیش ہونے تک اس پر بات نہیں کرنا چاہتیں، اس لیے وہ لوگوں اور میڈیا سے بھی اپیل کرتی ہیں کہ ان کے حوالے سے من گھڑت خبریں شائع نہ کی جائیں۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستانی فلم دنیا کے سب سے معتبر ایوارڈ شو میں غیر ملکی زبان کی کیٹگری کیلئے منتخب

اداکارہ نے لکھا کہ وہ ایک ماں ہونے کے ناتے سب افراد سے گزارش کرتی ہیں کہ ان کے خاندان کا میڈیا ٹرائل بند کیا جائے، کیوں کہ ان کے بچوں پر منفی اثرات پڑیں گے۔

شلپا شیٹی نے لکھا کہ وہ 29 سال سے شوبز انڈسٹری میں کام کر رہی ہیں اور انہوں نے کبھی کسی کا بھروسہ نہیں توڑا اور نہ ہی انہوں نے کسی کے جذبات کو ٹھیس پہنچائی ہے، اس لیے ان کا بھی حق ہے کہ ان کا احترام ہونا چاہیے۔

خیال رہے کہ ابھی یہ ثابت نہیں ہوا کہ شلپا شیٹی کے شوہر راج کندرا فحش فلمیں بنانے میں ملوث رہے ہیں یا نہیں، تاہم انہیں پورن مواد بنانے کے الزام میں 19 جولائی کو گرفتار کرکے جیل بھیج دیا گیا ہے۔

مذکورہ معاملے میں پولیس نے شلپا شیٹی سے بھی تفتیش کی ہے، کیوں کہ خبریں ہیں کہ جس کمپنی کے تحت ان کے شوہر نے فحش فلمیں بنانے کا منصوبہ شروع کیا تھا، اسی کمپنی میں اداکارہ ڈائریکٹر کی خدمات سر انجام دیتی رہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  ارطغرل غازی کے ”ترگت“ عید پاکستانیوں کے ساتھ منائیں گے

ان کے شوہر پر الزام ہے کہ انہوں نے ماڈلز اور اداکاراﺅں کو بلیک میل کرکے پورن فلموں میں کام کرنے پر مجبور کیا اور ان کی موویز شوٹ کرکے (ہاٹ شاٹ) نامی ایپلی کیشن پر اپ لوڈ کیں، جس کی رجسٹریشن بیرون ملک سے کی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں