Meango

پھلوں کے بادشاہ :آم کے فوائد

EjazNews

آم برِّصغیر کا مشہور پھل ہے اور پاکستان بھی ان خوش قسمت مُمالک میں شامل ہے،جہاں آم کی پیداوار کثرت سے ہوتی ہے۔ایک محتاط اندازے کے مطابق دُنیا بَھر میں آم کی کئی اقسام پائی جاتی ہیں۔ بھارت میں آم کی 280 سے زائد اقسام موجودہیں، جن میں سے 30 مشہور ہیں۔ اِسی طرح امریکا کی ریاست، فلوریڈا میں آم کی 400 سے زائد اقسام کاشت کی جاتی ہیں۔ پاکستانی آم کی جو اقسام معروف ہیں،ان میں چونسہ، سندھڑی،لنگڑا، دسہری، فجری، نیلم، انور رٹول، سرولی، الفانسو، سہارنی، ثمر بہشت، سانول اور دیسی شامل ہیں۔ پاکستان میں چونسہ آم بہت پسند کیا جاتا ہے، جب کہ سندھڑی پاکستان کا قومی پھل ہے،جو سندھ اور میرپور خاص میں کاشت ہوتا ہے۔ سندھڑی آم کا شمار دُنیا کے بہترین آموں میں کیا جاتا ہے۔دُنیا بھر میں بھارت آم کی پیداوار میں پہلے نمبر پر، جب کہ چین دوسرے اور پاکستان چھٹے نمبر پر ہے۔آم کو پھلوں کا بادشاہ مانا جاتا ہے کہ اس میں کاربوہائیڈریٹ، کیلشیم، فائبر، آئرن، پوٹاشیم، پروٹین اور وٹامنز اے، بی اور سی وافر مقدار میں پائے جاتے ہیں۔ یہ ایک اینٹی آکسیڈینٹ پھل بھی ہے۔ یعنی یہ جسم سے فاسد مادّے خارج کرتا ہے۔ آم کے بے شمار طبّی فوائد ہیں۔مثلاً:

یہ بھی پڑھیں:  پپیتا :یہ ہے پیٹ کا دوست

سرطان سےتحفظ :
آم میں کئی ایسے اجزاء پائے جاتے ہیں، جو بریسٹ کینسر سمیت بڑی آنت،پراسٹیٹ اور خون کے سرطان سے تحفّظ فراہم کرتےہیں۔

کولیسٹرول میں توازن:
آم میں وٹامن سی کے ساتھ فائبر اور پیکٹین (Pectin)پایا جاتا ہے، جو کولیسٹرول کی بڑھتی ہوئی مقدار کنٹرول کرنے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں۔

جِلد کی حفاظت :
آم کا استعمال جلد کو چمک دار، ملائم اور خُوب صور ت بناتا ہے۔

وزن میں کمی:
آم توانائی کے حصول کا عُمدہ ذریعہ ہے کہ اس میں فائبر کی خاصی مقدار موجود ہوتی ہے۔ یہ نظامِ ہضم بہتر کرتا ہے اور جسم سے غیر ضروری کیلوریز ختم کر کے وزن کم کرنے میں معاون ثابت ہوتا ہے۔

بینائی کے لیے مفید:
آم میں وٹامن اے بھی وافر مقدار میں پایا جاتا ہے، تو اس کے استعمال سے بینائی بہتر ہوجاتی ہے۔ نیز، شب کوری اور آنکھوں کو خشک ہونے سے محفوظ رکھتا ہے۔

نظامِ ہضم میں بہتری:
آم میں پائے جانے والے اینزائمز جسم سے پروٹین توڑنے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں۔ چوں کہ اس میں فائبر بھی پایا جاتا ہے،تو اس سے نظامِ ہضم درست رہتا ہے اور قبض اور پیٹ کی دیگر بیماریوں سے محفوظ رکھتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  موسم برسات کا مفید پھل

ہیٹ اسٹروک سے بچاؤ:
چوں کہ آم کھانے سے فوری توانائی حاصل ہوتی ہے،تو یہ گرمیوں میں ہیٹ اسٹروک سے محفوظ رکھتا ہے۔

قوّتِ مدافعت کی بحالی:
آم میں وٹامن اے، بی، سی اور کیروٹنائیڈز carotenoidsپائے جاتے ہیں، جو قوّتِ مدافعت بحال رکھنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔

یادداشت میں بہتری:
اگر آپ کسی کام پر توجّہ مرکوز نہیں کر پاتے ہیں یا یادداشت کم زور ہے، تو باقاعدگی سے آم کھائیں۔

آئرن، کیلشیم کا حصول:
آم میں آئرن بھی زائد مقدار میں پایا جاتا ہے،لہٰذا اس کا استعمال آئرن کی کمی دُور کرنے کا قدرتی علاج ہے۔نیز، یہ خواتین کے لیے تو بہت مفید پھل ہے کہ اسے باقاعدگی سے استعمال کریں تو نہ صرف آئرن، بلکہ کیلشیم کی کمی بھی دُور ہوجاتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں