Dubai

دبئی میں 10قیمتی ترین جائیدادیں فروخت

EjazNews

جہاں پر کورونا سے دنیا بھر میں بے روزگار ی پھیل رہی ہے وہی دنیا کے ترقی یافتہ ممالک کے امیر لوگ اپنی دولت کی چمک دمک دھکانے میں کبھی کسی موقع پر پیچھے نہیں رہتے ۔ ایسا ہی کچھ دیکھنے میں آرہا ہے دبئی کی پراپرٹی انڈسٹری میں۔

دبئی میں موجود پہلی دس قیمتی ترین جائیدادیں 2021ء میں فروخت ہوئیں ۔

لکس ہیبی ٹیٹ سودبیز انٹرنیشنل رئیلٹی کے تجزئیے کے مطابق 2021 کے پہلے نصف حصےمیں 10 ٹرانزیکشنز میں سے 7 کے ساتھ درخت کی شکل والے جزیرے سمیت پام جمیرا جائیداد خریداروں کے لئے انتہائی مقبول رہائشی علاقے کی فہرست میں بازی لے گئی۔

ان فروخت ہونے والی دس قیمتی ترین جائیدادوں میں سے کسی بھی جائیدا دکی قیمت کئی ملین درہم سے کم نہ تھی۔

پام جمیرا جائیدادوں کیلئے پہلی چار سب سے زیادہ ادا کی گئی ٹرانزیکشن 119.5 ملین درہم تا 89.18 ملین درہم کے درمیان رہی۔ پانچویں مہنگی ترین ٹرانزیکشن جمیرا بے جزیرے پر واقع بلغاری ریزارٹ پر ایک ولا کے لئے 87.5 ملین درہم کی گئی۔ اماراتی ہلز میں واقع ایک جائیداد کیلئے 72.38 ملین درہم ٹرانزیکشن کے بعد چھٹی ٹرانزیکشن میں بھی 81 ملین درہم پام جمیرا ولا شامل ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستانی ڈھول برطانوی نصاب کا حصہ بن گیا

آٹھویں اور نویں مہنگی ترین ٹرانزیکشنز بھی دو پام ولاز کیلئے کی گئیں جبکہ دسواں مہنگا ترین ولا اماراتی ہلز میں 68 ملین درہم میں فروخت ہوا۔

اگر آپ کسی غریب ملک کے رہنے والے ہیں تو اپنی کرنسی میں حساب مت کیجئے گا کہ اتنے ملین کے آپ کی کرنسی میں کتنے پیسے بنتے ہیں کیونکہ اگر آپ نے حساب کرنا شروع کر دیا تھا شاید آپ کا کلکولیٹر جواب دے جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں