chamion boarder

انسانی ہمدردی کے تحت کچھ دیر کیلئے چمن سرحد کھولی گئی

EjazNews

طالبان کے ویش اور دیگر علاقوں پر قبضے کے بعد پاکستان نے سرحد بند کردی تھی جس کی وجہ سے دونوں اطراف پر لوگ پھنس گئے تھے۔

چمن میں سرکاری عہدیداران نے سرحد کھولنے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ یہ فیصلہ انسانی ہمدردی کی بنیاد پر کیا گیا کیوں کہ سرحد کے دونوں جانب خواتین اور بچوں سمیت سیکڑوں افراد پھنسے ہوئے تھے۔

سرحد کھلنے کے بعد باب دوستی کے ذریعے افغانستان سے مریضوں سمیت تقریباً 800 افغان پاکستان میں داخل ہوئے جبکہ ویش میں پھنسے 160 پاکستانیوں کو بھی وطن واپس آنے کی اجازت دی گئی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ سرحد صرف پیدل چلنے والوں کے لیے 3 گھنٹے تک کھلی رہی۔

سرحدی حکام کا کہنا تھا کہ اس بات کا اب تک کوئی فیصلہ نہیں ہوا کہ جمعہ کے روز بھی سرحد کھولی جائے گی کہ نہیں۔

دوسری جانب موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق طالبان نے پاکستان ،افغانستان سرحد کے ساتھ موجود علاقوں پر قبضہ کرنے کے بعد تمام اہم چوکیوں کا کنٹرول سنبھال لیا ہے اور ویش کے علاوہ افغانستان کے ضلع اسپن بولدک میں اپنی پوزیشن مستحکم کرلی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  پلاٹ الاٹمنٹ کیس میں احتساب عدالت نے میاں نواز شریف کو اشتہاری قرار دے دیا

اپنا تبصرہ بھیجیں