PmIK_uzbikistan-3

پاکستان افغانستان اور ازبکستان ریلوے منصوبے سے خطے میں انقلاب آئے گا:وزیراعظم

EjazNews

وزیراعظم عمران خان کے اعزاز میں ازبکستان کے صدارتی محل میں باضابطہ استقبالیہ تقریب کا اہتمام کیا گیا۔

ازبکستان کے صدر شوکت مرزویوف نے وزیراعظم کا خیرمقدم کیا۔ اس موقع پر دونوں ممالک کے قومی ترانے بجائے گئے اور ازبکستان کی مسلح افواج کے ایک چاق چوبند دستے نے وزیراعظم کو گارڈ آف آنر پیش کیا۔

PmIK_uzbikistan-1

ازبک صدر نے کابینہ کے ارکان کا وزیراعظم سے تعارف کرایا جبکہ وزیراعظم عمران خان نے اپنے وفد کے ارکان کو ان سے متعارف کرایا۔
اس موقع پر وزیراعظم عمران خان اور ازبکستان کے صدر شوکت مرزویوف نے غیر رسمی تبادلہ خیال بھی کیا۔

وزیر اعظم عمران خان نےازبکستان اور پاکستان کے درمیان دوطرفہ تجارتی اور اقتصادی تعلقات کے فروغ کے لئے ازبکستان پاکستان بزنس فورم کا افتتاح کیا۔ ازبکستان کے وزیراعظم عبداللہ آریپوف نے بھی افتتاحی تقریب میں شرکت کی اور خطاب کیا۔

وزیراعظم عمران خان نے اپنے خطاب میں ازبکستان کے ساتھ پاکستان کے تاریخی، ثقافتی اور روحانی روابط کو اجاگر کیا اور علاقے کی بڑی معیشت کے طور پر وسط ایشیا اور ازبکستان کے ساتھ گہرے روابط کے لئے پاکستان کی طرف سے دی جانے والی اہمیت کاذکر کیا۔ وزیراعظم نے اس امرپر زور دیا کہ دونوں ممالک کو تجارتی اور اقتصادی تعلقات کومزید فروغ دینا چاہیے۔

یہ بھی پڑھیں:  پی ڈی ایم کی سیاسی تدفین ہوچکی ہے:وزیراطلاعات شبلی فراز

100 سے زائد پاکستان کی بڑی کاروباری شخصیات کی بزنس فورم میں شرکت کاذکرکرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ ازبک کاروباری شخصیات کے ساتھ مضبوط شراکت داری کو فروغ دینے کایہ ایک بڑا موقع ہے ۔

PmIK_uzbikistan-2

وزیر اعظم نے دونوں ممالک کی مختلف کمپنیوں کے درمیان بڑی تعداد میں کاروباری معاہدوں کا خیر مقدم کیا۔

وزیراعظم نے بالخصوص رابطے کے فروغ کی بنیادی اہمیت پر زور دیااور اس سلسلہ میں پاکستان کی بندرگاہوں کے ذریعے رسائی فراہم کرنے کے لئے تعاون فراہم کرنے کی اہمیت کو اجاگر کیا۔

وزیراعظم نے ٹرمز، مزار شریف، کابل اور پشاور کوملانے والے ریلوے منصوبے کی اہمیت کو بھی اجاگر کیا اور کہا کہ آپس میں رابطے کے فروغ کے ایجنڈے کو بڑھانے کے لئے افغانستان میں امن انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

انہوں نے امن عمل کی حمایت کے لئے پاکستان کی کوششوں پر بھی روشنی ڈالی۔

ازبکستان بزنس فورم سے خطاب میں وزیراعظم نے کہا کہ ہمسایہ ممالک کے ساتھ تجارت سے لوگوں کا معیار زندگی بلند ہوتا ہے۔پاکستان افغانستان اور ازبکستان ریلوے منصوبے سے خطے میں انقلاب آئے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ ازبکستان اور پاکستان میں تجارتی اور کاروباری تعلقات کو فروغ دینا چاہتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  سنگا پور کی ایکسپورٹس 330 ارب ڈالر ہیں، ہماری اب جاکے 25 ارب ڈالر ہوئی ہے اور ہم ہیں 22 کروڑ لوگ:وزیراعظم

یاد رہے:بزنس فورم میں مختلف بڑے برآمدی شعبوں اور لاجسٹک خدمات فراہم کرنے والی کمپنیوں کی نمائندگی کرنے والے 100 سے زائد بڑی کاروباری شخصیات اور سرمایہ کاروں نے شرکت کی۔

PmIK_uzbikistan

بزنس فورم کا انعقاد پاکستان اور ازبکستان کے درمیان تجارت کافروغ ، کاروباری وفود کے درمیان رابطے بڑھانا، تجارت اور سرمایہ کاری کے نئے مواقع کی نشاندہی اور کاروباری منصوبوں میں نجی شعبے کو شامل کرنے کے لئے کیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں