delta virus

سندھ میں انڈین وائرس کے 35کیسز سامنے آگئے

EjazNews

محکمہ صحت سندھ نے بیان میں کہا کہ جون سے اب تک ڈیلٹا کے 35 کیسز سامنے آچکے ہیں اور اس قسم سے متاثرہ افراد میں وائرس کی شدید علامات سامنے آئی ہیں۔

بیان میں کہا گیا کہ لیاری میں ایک ہی خاندان کے 5 افراد ڈیلٹا وائرس سے متاثر پائے گئے، تمام متاثرہ افراد کا علاج جاری ہے۔

محکمہ صحت سندھ نے کہا کہ رواں ماہ ڈیلٹا وائرس کے 18 کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں۔

دوسری جانب وزیر صحت سندھ ڈاکٹر عذرا پیچوہو نے عوام سے نقل و حرکت محدود کرنے اور احتیاطی تدابیر اپنانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ عوامی مقامات پر ماسک کا استعمال ضرور کریں۔

ان کا کہنا تھا کہ ڈیلٹا وائرس کے بھارت میں ہونے والے اثرات ہمارے سامنے ہیں، عوام کو ذمہ داری کا مظارہ کرنا ہوگا۔

واضح رہے کہ ملک میں وائرس کی ‘ڈیلٹا قسم کے اثرات سامنے آنا شروع ہوگئے ہیں اور حالیہ دنوں میں اس وائرس کے باعث کیسز میں اضافہ ہوا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  کورنا متاثرین کی تعداد پنجاب میں کم اور سندھ میں زیادہ ہو گئی

گزشتہ روز نیوز بریفنگ کے دوران وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا تھا کہ ڈیلٹا سمیت دیگر اقسام کے وائرس سے بچنے کے لیے ضروری ہے کہ ایس او پیز پر عمل کریں۔

انہوں نے کہا کہ ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کے لیے فوج سمیت مقامی انتظامیہ کی مدد حاصل کی جائے گی، خصوصاً سیاحتی مقامات جانے والوں کو کورونا سے متعلق پابندی کا سامنا ہوگا۔

گزشتہ ہفتے پنجاب کے ضلع روالپنڈی میں بھی ڈیلٹا وائرس کے 15 کیسز کی تشخیص ہوئی تھی۔

ڈویژنل کمشنر سید گلزار حسین شاہ نے حکام صحت سے احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مطالبہ کیا اور شہریوں پر زور دیا تھا کہ وہ اس وائرس کے مزید پھیلاؤ سے بچنے کے لیے جلد از جلد خود کو ویکسین لگوائیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں