imran_khan_

ایرانی اور صدر اور پاکستانی وزیراعظم کی ٹیلی فونک کیا گفتگو ہوئی؟

EjazNews

دونوں رہنماوں کے درمیان ہونے والی ٹیلی فونک بات چیت کے متعلق وزیراعظم کے دفتر سے جاری کردہ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کا ایران کے نو منتخب صدر سید ابراہیم کو منتخب ہونے پر مبارکباد دی۔

جاری کردہ اعلامیے کے مطابق دونوں رہنماوں کے درمیان مستقبل میں دو طرفہ تعلقات کی بہتری پر تبادلہ خیال کیا گیا اور دونوں ممالک کے درمیان معاشی و تجارتی تعلقات مزید مستحکم کرنے پر بھی بات چیت کی گئی۔

وزیراعظم عمران خان نے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ایران کے عوام نے آپ پر اعتماد کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے مسئلہ کشمیر پر ایران کی حمایت کا شکریہ بھی ادا کیا۔

ٹیلی فونک بات چیت میں دونوں رہنماوں نے مسئلہ کشمیر اور فلسطین کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

جاری کردہ سرکاری اعلامیے کے مطابق دونوں رہنماوں نے ایک دوسرے کو سرکاری دوروں کی دعوت دی اور اعلیٰ سطح کے تبادلے کو برقرار رکھنے پر اتفاق کیا۔

یہ بھی پڑھیں:  (ن) لیگ پنجاب کے ریجنل حصے کی پارٹی ہے گلگت بلتستان الیکشن سے انہیں کیا لینا دینا: معاون خصوصی برائے داخلہ و احتساب

وزیراعظم کے دفتر سے جاری کردہ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے ایرانی صدر سید ابراہیم رئیسی سے بات چیت میں کہا کہ پاکستان اور ایران کے سرحدی علاقوں کی طرف پناہ گزینوں کی آمد متوقع ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے واضح طور پر ایران کے صدر سید ابراہیم رئیسی سے کہا کہ پناہ گزینوں کی آمد پاکستان اور ایران دونوں کے لیے سنگین خطرہ پیدا کر سکتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں