Pakistan_citizen_Portal

22سالوں بعد ایک شکایت پر بیوہ بہنوں کو حق کیسے ملا؟

EjazNews

پاکستان سٹیزن پورٹل پر شکایت پردادرسی کے نتیجہ میں راولپنڈی کی دو بیوہ بہنوں کو 22 سال کے بعد وراثتی جائیداد کا حق مل گیا۔

پرائم منسٹر ڈیلیوری یونٹ (پی ایم ڈی یو) کی جانب سے جاری تفصیلات کے مطابق دو بیوہ بہنوں تنظیم اختر اور تنویر سہراب نے اپنی وراثتی زمین پر قبضہ اور وراثت کی تقسیم کے معاملہ کے حوالہ سے پاکستان سٹیزن پورٹل پرشکایت کی تھی جس پر وزیراعظم عمران خان نے فوری نوٹس لیا۔

دونوں بیوہ بہنوں کی پاکستان سٹیزن پورٹل پر شکایت میں کہا گیا تھا کہ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو نے بنا موقف جانے ان کی شکایت کو خارج کیا لہذا ہماری دادرسی کی جائے۔

پی ایم ڈی یو کے مطابق وزیراعظم نے چیف سیکرٹری پنجاب کو اس حوالے سے انکوائری کی ہدایت کی تھی۔ وزیراعظم نے یہ بھی ہدایت کی تھی کہ راولپنڈی ڈویژن کے تمام ریونیو افسران کی کارکردگی کی جانچ پڑتال کی جائے۔

یہ بھی پڑھیں:  ایوی ایشن کا طیارہ گر کر تباہ ، 18افراد جاں بحق

وزیر اعظم کے حکم نامہ میں کہا گیا کہ اعلی افسران اپنے ماتحت افسران کی کارکردگی کا جائزہ لیں۔ راولپنڈی کے سرکاری افسران کی کارکرگی رپورٹ جلد وزیراعظم آفس بھیجیں۔

سرکاری افسران کے عوامی شکایات سے متعلق ڈیش بورڈز کی جانچ پڑتال کی جائے، افسران عوام کے مسائل کو حل کرنے کیلئے اقدامات اٹھائیں۔

دریں اثناء دونوں بیوہ بہنوں تنظیم اختر اور تنویر سہراب نے اپنے ویڈیو پیغام میں کہا کہ یہ دن ہمارے لئے انتہائی خوشی کا دن ہے جب 22 سال کی جدوجہد کے بعد ہمیں ہمارا وراثتی حق ملا ہے، اس پر ہم اللہ تعالیٰ کے حضور سجدہ شکر بجا لاتے ہوئے وزیراعظم کے لئے دعا گو ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں