afghanista

افغانستان سے امریکہ کے نکلنے کے بعد کیاچین اہم اتحادی ہوگا؟

EjazNews

افغانستان سے امریکہ جارہا ہے اور اس کے جانے کے بعد کی صورتحال پر سب سٹیک ہو لڈر کو تشویش ہے۔ کیونکہ روس نے افغانستان کو بری حالت میں چھوڑا تھا جس کے بعد افغانستان میں ایک خانہ جنگی کا دور آیا ۔اب امریکہ ایک طویل جنگ کے بعد افغانستان سے جب جارہا ہے تو اس پر گزشتہ چند روز قبل ترکمانستان اور وزیراعظم پاکستان نے ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں تشویش کا اظہار کیا تھا کہ دوبارہ ایسے عناصر جو خطے میں انارکی پھیلانا چاہتے ہیں ان کو موقع نہ مل جائے۔

اس قسم کی تشویش کا اظہار چین کی جانب سے بھی سامنے آیا ہے۔لیکن افغانستان سے ا مریکہ کے نکلنے کے بعد کیا صورتحال ہوگی چین کا کیا کر دار ہوگا؟ یہ ابھی تک سوالیہ نشان سے بڑھ کر اور کچھ نہیں ہے۔

کیا افغانستان سے امریکہ کے نکلنے کے بعد چین اپنے پنجے گاڑے گا؟اس سوال کا جواب جرمن میڈیا نے اپنی رپورٹ میں کچھ اس طرح دیا ہے کہ امریکا اور مغربی ممالک کی افواج کی افغانستان سے روانگی کے بعد چین کابل حکومت کے ساتھ سلامتی اور اقتصادی تعاون بڑھانے کی سرتوڑ کوششوں میں مصروف ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  لگتا ہے برف پگھل رہی ہے

چینی میڈیا کے مطابق چین، افغانستان اور پاکستان کے وزرائے خارجہ کی ایک ویڈیو میٹنگ میں اس بات پر اتفاق کیا گیا ہے کہ افغانستان سے غیر ملکی افواج کا انخلا ایک ذمہ دار اور منظم انداز ہونا چاہیے تاکہ افغانستان کی سلامتی کی صورتحال مزید خراب نہ ہو اور دہشت گرد طاقتیں، دوبارہ قدم نہ جما سکیں۔

چینی وزیر خارجہ وانگ یی کے ایک بیان کے مطابق، تینوں ملکوں کو افغانستان اور اس کے ہمسایہ ملکوں کے مفادات کے تحفظ کے لیے تعاون اور بات چیت کے عمل کو مضبوط بنانے کی اشد ضرورت ہے۔

یہ بات بھی اپنی جگہ بجا ہے کہ اگر ابھی سے منصوبہ بندی نہ کی گئی تو پھر سے خطہ کہیں آگ اور شعلوں میں نہ گھر جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں