Rose

گلاب کا پھول کئی امراض میں بھی کام آتا ہے

EjazNews

دنیا بھر میں بے شمار رنگ برنگے پھول پائے جاتےہیں، مگر ان سب میں گلاب کو بادشاہ کا درجہ حاصل ہے،جب کہ اسے محبّت کی علامت بھی تصوّر کیا جاتاہے۔ گلاب صرف خوشبو بکھیرنے یا محبّت کے اظہار ہی کا ذریعہ نہیں، کئی امراض کے علاج کےلیے بھی فائدہ مند ہے۔ مثلاً:

عام طور پر خون کی حدّت، معدے کی تیزابیت یا پھر گرم اشیاء کے زیادہ استعمال سے منہ میں چھالے پڑجاتے ہیں،جن میں بےحد تکلیف ہوتی ہے اور کچھ کھایا پیا بھی نہیں جاتا۔ اگرعرقِ گلاب میں گلاب کا سفوف مِکس کرکے چھالوں پر لگالیا جائے،تو فوری آرام ملتا ہے۔منہ سے بدبوآنے اورمسوڑھوں سے خون رسنےکی صُورت میں گلاب کے جوشاندےسے غرارے فائدہ مند ثابت ہوتے ہیں۔ دِل کی کم زوری میں مبتلا مریض ایک کپ عرقِ گلاب میں آدھا چائے کا چمچ گلاب کا سفوف مِکس کرکے دِن میں دو بار استعمال کریں،لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ ماہرِ امراضِ قلب کی تجویز کردہ ادویہ استعمال نہ کی جائیں۔

یہ بھی پڑھیں:  گنٹھیا یا بڑے جوڑوں کا درد اور اس کا علاج

اطباء کا کہناہے کہ اگر آنتوں کی خراش، کم زوری یا خونی و صفراوی رطوبت کے باعث اسہال کی کیفیت ہو، تو گلاب بطور سفوف یا عرق استعمال کیا جائے۔ پسینے کی بدبو کے لیے بے شمار ڈیوڈرینٹس وغیرہ دستیاب ہیں، مگر ان کا زیادہ عرصے تک استعمال مضر ثابت ہوسکتا ہے، لہٰذا ایک شیشی میں گلاب کا سفوف اورعرق مکس کرکے فریج میں رکھ لیں۔روزانہ پسینے والی جگہوں پر اس مکسچر کا معمولی سا لیپ کرنے سے پسینے کی بُو نہیں آتی۔قبض، جسے اُمّ الامراض کہا جاتا ہے، اس کی تکلیف سے نجات کے لیے گلاب سے تیار ہونے والا گل قند شافی علاج ہے۔اور آنکھوں کی سُرخی دُور کرنے میں تو عرقِ گلاب کا کوئی ثانی نہیں۔جِلد، خصوصاً چہرے کی خُوب صُورتی و دِل کشی کے لیے عرق گلاب 10 گرام،ویزلین50 گرام،لیموں کا رَس اورکافور5،5گرام مِکس کر لیں۔پھر آنکھوں کا حصّہ چھوڑ کر چہرے پر کاٹن پیڈ کی مدد سے لیپ کرکے 30منٹ بعد دھولیں۔چہرہ یک دَم کِھل اُٹھے گا۔

یہ بھی پڑھیں:  سوہانجنا بھرپور سپر فوڈ

اپنا تبصرہ بھیجیں