sheikh rasheed

صحافی اسد طور پر حملے میں ملوث ایک ملزم کی شناخت کے قریب ہیں:وزیر داخلہ

EjazNews

اسلام آباد میں میڈیا بریفنگ کے دوران انہوں نے کہا کہ نادرا، وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) اور پولیس مل کر تحقیقات کررہی ہے۔ فنگر پرنٹس کی کل تک شناخت ہوسکتی ہے اور اگر آئند چند روز میں ملزمان کو گرفتار نہیں کرسکے تو اشتہار شائع کریں گے۔

شیخ رشید نے مزید کہا کہ ایک ملزم کی شناخت کے قریب ہیں۔

وزیر داخلہ نے واضح کیا کہ ملزمان کو گرفتار کرنا اس لیے بھی ضروری ہے کہ بعض عناصر اپنے غیر ملکی آقاؤں کو خوش کرنے کے لیے ملک کی خفیہ ایجنسیوں کو بلاجواز تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ جو لوگ ایسے واقعات پر ملک کے انتہائی اہم ادارے پر الزامات لگاتے ہیں تو انہیں اندازہ نہیں ہوتا کہ عالمی سطح پر ادارے کی ساکھ کو کتنا نقصان پہنچتا ہے۔

ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر داخلہ نے کہا کہ میں نے نجی نیوز چینل جیو پر تجزیہ کار اور اینکر حامد میر کے پروگرام کو بند نہیں کیا۔
شیخ رشید نے مزید کہا کہ میں گزشتہ کئی برس سے ان کے پروگرام میں شریک نہیں ہوا اور نہ ہی کوئی رابطہ ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  25مارچ 1992جب ہم ورلڈ کپ جیتے

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ یقینی طور پر ایک پالیسی ہونی چاہیے جس کی بنیاد پر ایسے واقعات میں ملوث عناصر کے خلاف سخت کارروائی ہو

شیخ رشید نے حکومت مخالف اتحاد پاکستان ڈیموکریکٹ موومٹ (پی ڈی ایم) سے متعلق کہا کہ جب میں آپ سے کہتا تھا کہ مسلم لیگ (ن) سے مسلم لیگ (ش) نکلے گی تو آپ میرا مزاق اڑا تے تھے۔

انہوں نے کہا کہ اب پی ڈی ایم میں صرف دو پارٹیاں رہ گئی ہیں۔

وزیر داخلہ نے کہا کہ پی ڈی ایم میں شریک تمام جماعتیں صرف میڈیا میڈیا کھیل رہی ہیں، اس میں کوئی حقیقت باقی نہیں رہی۔

وزیر داخلہ شیخ رشید نے پاکستان میں مزدور طبقے پر مشتمل افرادی قوت کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب 30 لاکھ ویزوں میں سے 30 فیصد ویزے پاکستانیوں کو تفویض کرے گا۔

انہوں نے کہا کہ ویزے تفویض ہونے سے ترسیلات زر میں اضافہ ہوگا اور معاشی نمو میں مزید بہتر آئے گی۔

یہ بھی پڑھیں:  ملک بھر میں کرونا وائرس کی صورتحال لمحہ بہ لمحہ بدل رہی ہے

علاوہ ازیں انہوں نے کویت سے متعلق بتایا کہ وہاں 52 پاکستانی قیدی ہیں جن میں سے صرف 6 واپس آنا چاہتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ زیادہ تر قیدی منشیات کے جرم میں جیل کاٹ رہے ہیں۔

شیخ رشید نے سائبر کرائم پر بات کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ برس 54 لاکھ جبکہ میرے دور میں 36 ہزار کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جن میں سے 6 ہزار کی انکوائری مکمل کرلی گئی ہے۔

علاوہ ازیں انہوں نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ سائبر ونگ کو جدید ٹیکنالوجی سے آراستہ کیا جائے اور اس ضمن میں بھرتیوں کے اشتہارات بھی آچکے ہیں۔

شیخ رشید نے اس عزم کا اظہار کیا کہ نادرا میں تکنیکی بنیادوں پر جدید تبدیلیوں کی ضرورت ہے۔

ایک اور سوال کے جواب میں وزیر داخلہ نے کہا کہ سعودی عرب میں ویکسینیشن کا معاملہ وزیر اعظم عمران خان کے علم میں ہے جس پر جلد ساری صورتحال واضح ہوجائے گی۔

یہ بھی پڑھیں:  چین نے مسعوداظہر کیخلاف قرارداد موخر کروادی

علاوہ ازیں انہوں نے اس تاثر کو مسترد کردیا کہ کسی کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ یا بلیک لسٹ میں شامل کیا جارہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں