indianAirForce

بھارتی فضائیہ کا ایک اور طیارہ گر کر تباہ

EjazNews

بھارتی صوبہ پنجاب کے ضلع موگا کے گاؤں لنگیانہ میں طیارہ گرا جس کے نتیجے میں طیارہ تباہ اور ایک پائلٹ کی موت ہو گئی جس کی شناخت اسکواڈرن لیڈر ابھینو چوہدری کے نام سے ہوئی ہے۔جس وقت حادثہ پیش آیا اس وقت سکواڈرن لیڈر رات کو ٹریننگ کررہے تھے اور بھارتی فضائیہ نے حادثے کی تصدیق کردی ہے۔

انڈین یڈیا کے مطابق ہلاک پائلٹ کی لاش کئی گھنٹے تلاش کے بعد جائے حادثہ سے 2 کلومیٹر دور ملی البتہ واقعے میں مزید کوئی جانی نقصان نہیں ہوا جبکہ طیارے کی تباہی سے کسی طرح کی املاک کو بھی نقصان نہیں پہنچا۔

موگا پولیس کے ایس پی ہیڈ کوارٹرز گردیپ سنگھ نے بتایا کہ پائلٹ کی لاش 4 گھنٹے کی تلاش کے بعد حادثے سے 2 کلو میٹر دور ملی، پیراشوٹ کھلا ہوا ملا جبکہ انہوں نے ڈیوائس کے ذریعے ایس او ایس بھی بھیجا تھا لیکن اس وقت تک ان کی موت واقع ہو چکی تھی۔

یہ بھی پڑھیں:  امریکی صدر کی فراخدلی ، کم جونگ ان سے شمالی اور جنوبی کوریا کی سرحد پر ملاقات

پولیس افسر کے مطابق پائلٹ نے پیراشوٹ کے باحفاظت لینڈنگ کی کوشش کی لین ایسا لگتا ہے کہ وہ اس میں کامیاب نہ ہوئے جس کے نتیجے میں ان کی گردن اور ریڑھ کی ہڈی ٹوٹ گئی۔
گردیپ سنگھ نے انڈین میڈیا کو بتایا کہ طیارے نے راجستھان سے لدھیانہ کے علاقے گڑگاؤں کے لیے نرات میں ٹریننگ کی غرض سے اڑان بھری تھی اور جس وقت طیارہ گر کر تباہ ہوا، اس وقت وہ سورت گڑھ واپس آ رہا تھا۔

انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے ہم اس طیارے کے حاڈثے میں پائلٹ کو نہ بچا سکے لیکن کھلے میدان میں طیارہ تباہ ہونے کی وجہ سے کسی بھی قسم کا مزید جانی یا مالی نقصان نہیں ہوا۔

پولیس کے مطابق طیارہ گرنے سے جیسے ہی دھماکا ہوا تو مقامی افراد نے اسے بم دھماکا سمجھ کر فوری پولیس کنٹرول روم کو اطلاع دی جس کے بعد پولیس نے فوری طور پر جائے وقوع پر پہنچ پر کارروائی شروع کی۔

یہ بھی پڑھیں:  پیرو کے سابق صدر نے خودکشی کرلی

بھارتی فضائیہ نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر حادثے پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مغربی سیکٹر سے رات کو اڑان بھرنے والے طیارے کو حادثہ پیش آیا جس کے نتیجے میں اسکواڈرن لیڈر ابھینو چوہدری کو جان لیوا چوٹیں آئیں، انڈین ایئرفورس ان کے اہلخانہ سے تعزیت کرتی ہے اور اس غم میں برابر کی شریک ہے۔

بھارتی فضائیہ نے حادثے کی وجہ جاننے کے لیے عدالتی تحقیقات کا حکم دیا ہے۔
بھارت میں اکثر ایئرفورس کے طیاروں کو دوران ٹریننگ حادثات پیش آتے رہتے ہیں جس کے نتیجے میں درجنوں پائلٹ ہو چکے ہیں۔

رواں سال 17 مارچ کو بھارتی ایئر فورس کے مگ-21 طیارہ وسطی بھارت میں گر کر تباہ ہوگیا جس کے نتیجے میں پائلٹ ہلاک ہوگیا تھا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بھارت کے وزیر مملکت برائے دفاع شریپاد نائیک نے 2019 میں پارلیمنٹ میں کہا تھا کہ 2016 سے اس وقت تک بھارتی فضائیہ کے 27 طیارے تباہ ہوئے جن میں 15 جنگی جہاز اور ہیلی کاپٹرز بھی شامل تھے۔

یہ بھی پڑھیں:  اسرائیلی سافٹ وئیر سے اپوزیشن کی جاسوسی ، انڈین اپوزیشن کیا کہہ رہی ہے؟

سال 19-2018 میں طیارے گرنے کے واقعات میں اضافہ ہوا اور بھارتی فضائیہ 7 جنگی جہاز، 2 ہیلی کاپٹرز اور 2 ٹرینرز سے محروم ہوگئی تھی۔