سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ

فلسطین اور اسرائیل کی لڑائی پورے خطے کو ناقابل کنٹرول بحران میں مبتلا کر سکتی ہے:سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ

EjazNews

اقوام متحدہ کےسیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس نے اتوار کو اسرائیل اور فلسطین کے درمیان تشدد فوری روکنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ جاری لڑائی پورے خطے کو ’ناقابل کنٹرول‘ بحران میں مبتلا کر سکتی ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق انتونیو گوتریس نے فلسطین کی صورتحال پر ہونے والے سکیورٹی کونسل کے سیشن سے افتتاحی خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’لڑائی کو بند ہونا چاہیے اور اسے فوری بند ہونا چاہیے۔‘

گوتریس نے ایک ہفتے سے جاری لڑائی کو ہولناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ ناقابل کنٹرول سکیورٹی اور انسانی بحران پیدا کر سکتا ہے جو کہ نہ صرف مقبوضہ فلسطین اور اسرائیل میں بلکہ پورے خطے میں تشدد کو بڑھاوا دے گا۔

گوتریس نے کہا کہ انہیں اسرائیل کے فضائی حملوں میں فلسطینیوں کی ہلاکت پر صدمہ ہے۔ انہوں نے جاری تشدد سے اسرائیل میں ہونے والی ہلاکتوں پر بھی افوس کا اظہار کیا۔

گوتریس نے اتوار کو ہونے والے تازہ ترین تشدد کی مذمت کی جس میں 40 فلسطینی ہلاک ہوگئے۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستانی نژاد ساجد جاوید برطانیہ میں وزیر صحت مقرر

’ خونریزی، تباہی اور خوف کے اس احمقانہ سائیکل کو فوری بند ہونا چاہیے۔ ’ایک طرف مارٹر گولے اور راکٹس اور دوسری طرف فضائی اور آرٹلری کی بمباری ہر صورت بند ہونا چاہیے۔ میں تمام فریقین سے اپیل کرتا ہوں کہ اس کال پر کان دھریں۔‘