Delhi_lock_down

بھارت میں کورونا وباء تھم نہ سکی

EjazNews

بھارت میں کورونا وباء تھم نہ سکی، ہفتے کے روز ملک بھر میں کورونا کے سوا 3لاکھ سے زائد (326098)نئے کیسز سامنے آگئےاور 3890اموات کی تصدیق کی گئی ہے۔جسکے بعد مجموعی ہلاکتوں کی تعداد 2لاکھ 66ہزار 207، جبکہ مجموعی کورونا کیسز 2کروڑ 43لاکھ72ہزار 907ہوگئے ہیں۔ریاست مہاراشٹرا میں ریکارڈ 39ہزار 929کورونا کیسزاور 695اموات ریکارڈ کی گئی ہیں۔

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نےانتباہ جاری کیا ہے کہ بھارت میں کورونا وباءکا دوسرا سال پہلے سے کہیں زیادہ مہلک ہوسکتا ہے۔امیرممالک کو بچوں کی ویکسی نیشن سے پہلے غریب ممالک کیلئے کوویکس گلوبل ویکسین شیئرنگ کو کوروناخوراکیں عطیہ کرناچاہئیں تاکہ تمام ممالک میں ضرورت مند افراد کو تحفظ دیاجاسکے۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مہاراشٹرا میں 39ہزار923 نئے کورونا وائرس کے مریضوں اور695 اموات کے بعد کیرالہ میں34ہزار694کیسز ، کرناٹکا41ہزار779 ،تامل ناڈو 31میں892 ، آندھرا پردیش22ہزار18 ، مغربی بنگال20ہزار839 ، اتر پردیش 15ہزار747 اور دہلی میں8ہزار506نئے کیسز سامنے آئے۔

عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ٹیڈروس ادھانوم نے کہا کہ انڈیا کے حوالے سے ہمیں سخت تشویش لاحق ہے جہاں وبا کا دوسرا سال پہلے کے مقابلے میں بدترین شکل اختیار کرسکتاہے۔

یہ بھی پڑھیں:  متحدہ عرب امارات اور اسرائیل کا معاہدہ، ایرانی ڈر یا پھر فلسطینیوں سے غداری

عالمی ادارہ صحت کا کہناہے کہ امیر ممالک میں بچوں کی کورونا ویکسی نیشن کرنے سے قبل عالمی سطح پر غریب ممالک میں ویکسی نیشن شروع کی جائے، ترقی یافتہ ممالک کوویکس پروگرام میں کورونا ویکسین کی خوراکیں عطیہ کریں۔امیر ممالک اب بچوں اور ٹین ایجرز کی کوروناویکسی نیشن کررہےہیں جبکہ غریب ممالک بمشکل ہی طبی عملے اور غیرمحفوظ افراد کیلئے کوروناویکسی نیشن شروع کرسکےہیں۔

انہوں نے کہا کہ امیر ممالک کو نوجوان اور صحت مند افراد کی ویکسینیشن کرنے کے بجائے کوویکس گلوبل ویکسین شیئرنگ کو کوروناخوراکیں عطیہ کرنی چاہئیں تاکہ تمام ممالک میں ضرورت مند افراد کو تحفظ دیاجاسکے۔ٹیڈروس ادھانوم کی جانب سے یہ بیان بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کی گزشتہ روز ملک بھر میں وبا ءکے تیزی سے پھیلنے کے حوالے سے تشویش کے بعد گزشتہ روز آن لائن اجلاس میں سامنے آیا۔