pakistan_win_zim_t20

پاکستان نے ٹی 20 فائنل زمبابوے سے جیت لیا

EjazNews

پاکستان نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے 20 اوورز میں 3 وکٹوں کے نقصان پر 163 رنز بنائے جس میں محمد رضوان نے سب سے زیادہ 89 رنز اسکور کیے اور ناٹ آؤٹ رہے۔

پاکستان کی پہلی وکٹ 35 رنز کے اسکور پر گری جب میچ کے پانچویں اوور میں شرجیل خان کیچ آؤٹ ہونے کے بعد پویلین لوٹ گئے۔

بقیہ دونوں وکٹیں 19ویں اوور میں گریں جب تیسری گیند پر کپتان بابر اعظم 52 رنز بنا کر کیچ آوٹ ہوئے اور ان کے بعد کریز پر آنے والے فخر زمان بھی اگلی ہی بال پر بغیر کوئی رن بنائے وکٹ گنوا بیٹھے۔

زمبابوے کی جانب سے لیوک جونگے نے تینوں وکٹیں حاصل کیں۔

ہدف کے تعاقب میں زمبابوے کے اوپنر نے بھی 5 اوورز میں 37 رنز کی شراکت بنائی تاہم حسن علی نے مساکانڈا کی اننگز 10 رنز پر سمیٹ لی۔

اوپنر ویسلے میدھیویر نے اپنی نصف سنچری بھی مکمل کی اور تادیواناشے مارومانی کے ہمرا دوسری وکٹ پر ٹیم کی سنچری بھی بنائی۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستان اور ویسٹ انڈیز کی سیریز بارش کی نظرہو گئی

مارومانی 35 رنز بنا کر محمد حسنین کی وکٹ بن گئے، ان کی اننگز میں 4 چوکے شامل تھے۔

ویسلے کی اننگز 59 رنز پر حسن علی ختم کردی اس وقت زمبابوے کا اسکور 16 ویں اوور میں 109 رنز تھا، جس کے بعد تجربہ کار برینڈن ٹیلر نے 20 رنز بنا کر تھوڑی مزاحمت ضرور کی لیکن دیگر بلے باز دوہرے ہندسے کو بھی عبور نہیں کر پائے۔

pak_vs_zim_third3
پاکستانی ٹیم کی کارکردگی فائنل میں پہلے سے بہت بہتر رہی اور ٹیم ورک نے ہی میچ جیتنے میں کامیابی دلوائی

حسن علی نے شان دار باؤلنگ کرتے ہوئے میزبان ٹیم کو شدید دباؤ سے دوچار کرتے ہوئے قومی ٹیم کی جیت کی راہ ہموار کردی۔

زمبابوے کی ٹیم مقررہ اوور میں 7 وکٹوں پر 141 رنز بنا سکی اور 24 رنز کے فرق سے میچ کے ساتھ ساتھ سیریز بھی ہار گئی۔

حسن علی نے سب سے زیادہ 4، حارث رؤف نے 2 اور محمد حسنین نے ایک وکٹ حاصل کی۔

ٹیم کے لیے شان دار کارکردگی پر حسن علی کومیچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں:  1رنز سے سنچری نہ کرپانے والے 10پاکستانی کھلاڑی

اس میچ میں بابر اعظم نے ورات کوہلی سے ایک اور اعزاز چھین لیا اور وہ ٹی20 فارمیٹ میں تیز ترین 2000 رنز بنانے والے کھلاڑی بن گئے۔

pak_vs_zim_third
بابر اعظم نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کر لیا

خیال رہے کہ سیریز کا پہلے میچ میں پاکستان نے محمد رضوان اور باؤلرز کی عمدہ کارکردگی کی بدولت زمبابوے کو پہلے ٹی20 میچ میں 11 رنز سے شکست دی تھی۔
تاہم دوسرے میچ میں زمبابوے نے دوسرے ٹی ٹوئنٹی میں باؤلرز کی شان دار کارکردگی کی مدد سے پاکستان کی پوری ٹیم کو صرف 99 رنز پر آؤٹ کرکے باآسانی 19 رنز سے شکست دے دی تھی۔

چنانچہ یہ ٹی 20سیریز ایک ایک سے برابر ہونے کے بعد آج کا میچ اس کے فاتح کا فیصلہ کرے گا۔

تیسرے میچ کے لیے شرجیل خان، سرفراز احمد اور حسن علی کو دوبارہ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

پاکستان: بابر اعظم (کپتان)،شرجیل خان، سرفراز احمد، فخر زمان، محمد رضوان، محمد حفیظ، فہیم اشرف، حسن علی، محمد حسنین، حارث رؤف، شرجیل خان اور عثمان قادر
زمبابوے: سین ولیمز (کپتان)، ویزلے مدہیورے، تدیوَناشے مرومانی، رائن بَرل، ریجِس چاکبوا، لیوک جونگوے، ویلنگٹن مساکڈزا، بلیسنگ مزربانی اور رِچرڈ نراوا، تریسائیمساکنڈا

یہ بھی پڑھیں:  پہلے ٹی ٹونٹی میں نیوزی لینڈ کی 5وکٹوں سے جیت