pakistan wint third t20

پاکستانی ٹیم کی شاندار بیٹنگ، مشکل ہدف آسانی سے حاصل کرلیا

EjazNews

پاکستان اور سائوتھ افریقہ کے درمیان تیسرا ٹی ٹونٹی میچ شروع ہو گیاہے۔ پاکستان اور سائوتھ افریقہ کے درمیان ٹاس پاکستان نے جیت کر پہلے بائولنگ کا فیصلہ کیا ۔

پاکستان اور سائوتھ افریقہ کے درمیان یہ تیسرا ٹی ٹونٹی میچ کھیلا جارہا ہے اس سے قبل دو میچ ہوئے جو ایک ایک سے برابر رہے۔

جنوبی افریقن اوپنرز یانیمن ملان اور ایڈین مارکرم نے اپنی ٹیم کو عمدہ آغاز فراہم کیا اور سینچری پارٹنرشپ قائم کی۔

pak_vs__SA_thirdT20
pak_vs__SA_thirdT20

پاکستان کو پہلی کامیابی 108 کے مجموعی سکور پر ملی جب محمد نواز نے مارکرم کو آؤٹ کیا، انہوں نے 63 رنز بنائے۔
دوسرے اوپنرز یانیمن ملان کو بھی محمد نواز نے ہی آؤٹ کیا جہوں نے 55 رنز کی اننگز کھیلی۔

تیسری وکٹ 143 کے مجموعی سکور پر گری جب فہیم اشرف نے جارج لنڈے کو آؤٹ کیا، جنھوں نے 22 رنز بنائے۔

ہینرک کلاسن آؤٹ ہونے والے چوتھے کھلاڑی تھے جنھیں حسن علی نے 15 رنز پر بولڈ کیا۔

یہ بھی پڑھیں:  دوسرا ٹی ٹونٹی:پاکستان کی دوسری جیت

جنوبی افریقہ نے پاکستان کو جیت کے لیے 203 رنز سکور کیے۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے سب سے زیادہ رنز مارکرم نے بنائے۔

پاکستان کی جانب سے محمد نواز 2 وکٹوں کے ساتھ سب سے کامیاب باؤلر رہے جبکہ فہیم اشرف، حسن علی اور شاہین شاہ آفریدی نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔

south africa 203

پاکستان نے ہدف کا تعاقب شروع کیا تو ابتدائی دو اوورز میں دونوں بلے باز زیادہ کھل کر بیٹنگ نہ کر سکے اور ایسا لگا کہ شاید پاکستانی ٹیم ایک بڑے ہدف کے بوجھ تلے دب کر مجموعے کے حصول میں ناکام رہے۔

لیکن پھر بابر اعظم اور محمد رضوان دونوں نے جارحانہ بیٹنگ کا سلسلہ شروع اور جنوبی افریقی باؤلرز کے چھکے چھڑا دئیے۔

دونوں کھلاڑیوں بالخصوص بابر کا انداز انتائی جارحانہ تھا جو گزشتہ میچ میں سست رفتار نصف سنچری کی کسر پوری کرنے کے موڈ میں نظر آئے۔

گزشتہ میچ میں 50 گیندوں پر 50 رنز بنانے والے قومی ٹیم کے کپتان نے اس میچ میں صرف 27 گیندوں پر اپنی نصف سنچری مکمل کی۔

یہ بھی پڑھیں:  برطانیہ میں پاکستانی نژاد پہلی باکسنگ کوچ

دوسرے اینڈ سے رضوان نے بھی ان کا بھرپور ساتھ دیا اور 32 گیندوں پر نصف سنچری مکمل کی۔

جنوبی افریقہ کو اس موقع پر وکٹ لینے کا موقع ملا جب 13ویں اوور کی پہلی گیند پر رضوان نے پوائنٹ پر شاٹ کھیلا لیکن وہاں موجود بلجون کیچ نہ تھام سکے۔

بابر نے عمدہ بیٹنگ کا سلسلہ جاری رکھا اور 27 گیندوں پر نصف بنانے والے بلے باز نئے اپنی دوسری نصف سنچری صرف 22 گیندوں پر بناتے ہوئے ٹی20 انٹرنیشنل میں پہلی سنچری مکمل کر لی۔

man of the match baber azam
بابر اعظم کو مین آف دی میچ قرار دیا گیا

ببار نے صرف 49 گیندوں پر اپنی نصف سنچری مکمل کی اور ہدف کے تعاقب سے محض چند قدم کی دوری پر 122 رنز کی شاندار انگز کھیلنے کے بعد پویلین لوٹے، 59 رنز کی اس اننگز میں 4 چھکے اور 15 چوکے شامل تھے۔

پاکستان نے 18 اوورز میں 204 کا ہدف حاصل کر لیا اور سیریز میں 1-2 کی برتری بھی حاصل کر لی۔
محمد رضوان نے 47 گیندوں پر 73 رنز کی اننگز کھیلی اور ناقابل شکست رہے۔

یہ بھی پڑھیں:  انڈین نژاد آئی سی سی چیف ایگزیکٹو کو جبری رخصت پر بھیج دیا گیا

بابر اعظم کو عمدہ بیٹنگ پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

تیسرے ٹی ٹوئنٹی کے لیے پاکستان نے ٹیم میں تین تبدیلیاں کی ہیں جبکہ جنوبی افریقا نے اپنی ٹیم میں ایک تبدیلی کی ہے۔

شرجیل خان کی جگہ فخر زمان کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے جب کہ ونڈر ڈیوسن لبوڈے کی جگہ ٹیم میں شامل ہوئے ہیں۔اس کے علاوہ عثمان قادر اور محمد حسنین کی جگہ آصف علی اور حارث روف کو شامل کیا گیا ہے۔

پاکستان: بابر اعظم(کپتان)، فخر زمان، حیدر علی، محمد رضوان، محمد حفیظ، آصف علی، محمد نواز، فہیم اشرف، حسن علی، شاہین شاہ آفریدی اور حارث رؤف۔
جنوبی افریقہ: ہنری کلاسن(کپتان)، جینمن ملان، ایڈن مرکرم، راسی وین ڈر ڈوسن، پیٹ وین بلجون، جیارج لنڈے، ایندائل فلکوایو، سیسانڈا مگالا، بیورن ہینڈرکس، لیزاڈ ولیمز اور تبریز شمسی۔