مختلف بیماریوں کا گھریلو علاج

EjazNews

یرقان: میں گیا تو ری ٹینڈے مونگ اور مسور کی دال کھائیں۔

گلے کی خراش: کیلئے لونگ چبا کر چوس لیں، فورا آرام آجائے گا۔

آواز بیٹھ جائے: ایک چمچ شہد میں پیاز کا پانی ملا کر پی لیں۔

ہیپا ٹائٹس سی کیلئے: گائے کے دودھ کی دہی بنا کر خوب کھائیں۔

دانت کا درد :کدو اورلہسن کے پانی کی کلیاں کریں۔

گرمیوں میں سر درد کیلئے :نہار منہ تربوز کالی مرچ چھڑک کے کھائیں۔

گھٹنوں کے درد کیلئے: پاو تل کے تیل میں پاو ادرک اور پاو لہسن جلا کر رکھ لیں اور اس سے مالش کریں۔

کان کا درد: پیاز کا پانی اور سیب کا سرکہ ملا کر کان میں آہستہ آہستہ ڈالیں، دردٹھیک ہو جائے گا۔

کان کا بہنا:مہندی کے پتے چند جوئے لہسن کے اور ایک چمچ کلونجی زیتون کے تیل میں ابال لیں اور ٹھنڈا ہونے پر کان میں ڈالیں۔

کان کا درد: نیم کے پتوں کو کچل کر ان کا رس ململ کے کپڑے سے نکال لیں اور کان میں قطرے ڈالیں۔ ان کا درد دور ہو جائے گا۔

الرجی کیلئے :ایک چٹکی کلونجی بندگوبھی کے ساتھ ملا کر کھائیں۔

کیسٹرول کم کرنے کیلئے: صبح نہار منہ لہسن پانی کے ساتھ کھائیں۔ یا کھانے سے پہلے دور اخروٹ کھائیں۔

الرجی سے متاثرہ حصے کے لئے :پودینہ کا پانی بنا کر الرجی سے متاثرہ حصے پرلگائیں۔

ٹانگوں کی درد کیلئے: ایک چھٹانک تل کے تیل میں 10 جوے لہسن جلا کر اس سے مالش کر لیں۔

انفیکشن اور شوگر کیلئے :سات دانے پنیر(خمزیرہ) کے ڈھوڈے پانی میں رات کو بھگو دیں اور اسی پانی سمیت کھالیں۔

معدہ اور گلے کے انفیکشن کیلئے: ایک کپ انجیر ،ایک کپ منکا، دوچمچ پسی ہوئی ملٹھی، دولیٹرجو کا پانی (جوکو پانی میں ابال کر پانی حاصل کریں) اور سادہ پانی ایک لیٹر لے کر تمام اشیاءکو پکائیں۔ جب پانی 1لیٹر رہ جائے تو چھان لیں۔ اس پانی کو روزانہ 1/2 کپ گرم پیناہے۔

ٹینشن اور ڈپریشن کیلئے: 50 گرام اناردانہ، 50 گرام سوکھا دھنیا اور 10 گرام الائچی موٹی موٹی کوٹ کر رکھ لیں۔ آدھا چمچ دن میں تین مرتبہ چبا کرکھالیں۔ تین ماہ تک استعمال کریں۔

یہ بھی پڑھیں:  گھریلو ٹوٹکے

جسم کے دانے اورپھنسیوں کیلئے: 14پتے نیم کے 7دانے کالی مرچ کے ساتھ پیس لیں اور پانی کے ساتھ پی لیں ،دانے اور پھنسیوں میں آرام آجائے گا۔

ایگزیما کے دانے : شہد اور دار چینی کا پوڈرمکس کر کے دانوں پر لگا ئیں۔

شوگر کیلئے :آم کے ہرے پندرہ پتے دھو کر آدھے گلاس پانی میں آدھ گھنٹہ بھگو دیں اور نہار منہ پی لیں۔

تارا میرا ،ملٹھی ،ہرمل ،سونف ،کالا نمک اور چھوٹی چندن۔ ان سب کو ہم وزن لے کر پیس کر پھکی بنا لیں۔ روزانہ ایک چمچ لیں۔ یا پھر سات دانے خمزیرہ (پنیر ڈھوڈا) میں بھگوکرصبح نہار منہ پی لیں۔

بواسیر:مہندی اور زیتون کا تیل پکالیں اور ٹھنڈا ہونے پر بوتل میں ڈال دیں۔ دن میں دو باردانوں پر لگا لیں۔ کافور کی ٹکیہ کوگلیسرین میں پیس کر پیسٹ بنا لیں اور پیسٹ کو بواسیر کے دانوں پر دن میں دو مرتبہ لگا لیں۔

دل کے مرض، بلڈ پریشر اور گھٹنوں کے درد کیلئے (یہ نسخہ شوگر کیلئے نہیں ہے): شہد ایک پیالی ،پھلوں کا سرکہ ایک پیالی اور دیسی لہسن کے آٹھ جوئے۔ ان سب کو گرائنڈر میں پیس کر صاف بوتل میں ڈال دیں فریج میں آٹھ دن کے لئے رکھ دیں۔ آٹھ دن کے بعد نہار منہ ایک چمچ کھالیں اور گھنٹے بعد ناشتہ کر لیں۔

بلڈ پریشر کیلئے اور کیلشیم کی کمی کیلئے: میتھی دان کا پوڈر بنالیں۔ روزانہ رات کو ایک چمچ آدھ گلاس پانی میں بھگو دیں اور صبح نہار منہ پی لیں۔

سردیوں میں بلڈ پریشر کیلئے :میتھی کے پتے ،سلاد کے پتے، دھنیا ،پودینہ، پالک اور ساگ کو ملا کر جوس نکال لیں۔ اب اس جوس میں شہد ملا کر پی لیں۔ روزانہ کا ایک گلاس پی لیں۔

ایک دیسی لہسن کو کوٹ لیں۔ اس لہسن کو آدھ پیالی گرم پانی میں ڈال دیں۔ تھوڑی دیر بعد پانی چھان لیں اور نہار منہ پی لیں۔

ہائی بلڈ پریشر: لہسن کی چٹنی، سرکے کے ساتھ تیار کریں اور کھانے کے ساتھ استعمال کریں۔

بلڈ پریشر کنٹرول کرنے کیلئے: ایک چائے کا چمچ میتھرے لے کر پانی کے گلاس میں بھگو کر رکھ لیں۔ تھوڑی دیر کے بعد اس پانی کو پی لیں۔ اسی طرح روزانہ پانی پئیں،افاقہ ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں:  کچن اور گھر یلوٹوٹکے

بلڈ پریشر کیلئے : ثابت اسپغول، نیاز بو کے پتے ،جمہاں کے بیج ( تارامیرا) ہم وزن لے کر روز کھانے سے پہلے ایک چمچ کھالیں۔

گردے کی پتھری کیلئے:
تخم خربوزہ 50 گرام ، بڑی الائچی 25 گرام، تخم کاہو 25 گرام، ان تینوں کا پوڈر بنالیں اور روزانہ کچی لسی کے ساتھ ایک چمچ کھالیں۔
بلڈ پریشر: بلڈ پریشر میں زیادہ پانی استعمال کریں اور کھانے میں لہسن شامل کریں۔

بلڈ پریشر کیلئے: چھوٹی چندن، سفید زیرہ اور سونف ( 50 گرام) سب برابر ملا لیں اورپیس لیں۔ روزانہ صبح اور شام 1/2 چائے کاچمچ لے لیں۔

گیارہ پتے پودینے، 8 عدد کالی مرچ ،آدھ چمچ سفید زیرہ، دو تین پوتھی لہسن کو رات پیس کر فریج میں رکھ لیں اور نہار منہ کھا لیں روز انہ اسی طرح خوراک بنا کر کھائیں۔
بلڈ پریشر کم کرنے کیلئے : نہار منہ نیاز بو کے پتے دھو کر کھالیں اور اوپر سے دو تین گھونٹ پانی پی لیں۔

بوڑھے لوگوں کے جوڑوں کے درد کیلئے: سوانجان تلخ 15 گرام اور پھٹکری 25 گرام کو ملا کر پوڈر بنالیں۔ پوڈر بنانے سے پہلے پھٹکری کو ہلکا سا توے پر جلا لیں، صبح شام1/4 دودھ یا شہد کے ساتھ لے لیں۔

جوڑوں کے درد کیلئے : کوار گندل (ایلوویرا) ایک انچ کاٹکڑا صبح نہار منہ پج کے ساتھ لے لیں۔ اس کے پتے کو درمیان سے چھیل کر گودہ نکالا جاتا ہے۔ ایک انچ ٹکڑے میں سے تقریباً ایک چمچ گودہ نکلے گا۔ جوڑوں کے درد کیلئے: سرسوں اور لونگ کے تیل کو پکالیں اور بوتل میں ڈال کر رکھ لیں۔ روز رات کو مالش کر لیں۔

ہلدی 300 گرام سوجی 300 گرام، میوہ، شکر اور چار مغز حسب منشا لے کر حلوہ بنا کر روز حسب ضرورت کھالیں۔ حلوہ بنانے کیلئے پہلے ہلدی کو اچھی طرح بھون لیں اور پھرسوجی شامل کر کے بھون لیں پھر شکر کا شربت بنا کر ڈال دیں اور بھون کر حلوہ بنالیں۔ سب سے آخر میں میوے شامل کر لیں۔

جوڑوں کی درد کیلئے: (1) سرسوں کا تیل اور لاہوری نمک ملا کر جوڑوں کی مالش کریں۔ (2) رائی ،کلونجی اور میتھی دانہ ہم وزن لے کر پیس لیں۔ نہار منہ آدھا چمچ پانی کے ساتھ لے لیں۔ (3) پاو لہسن چھلکوں سمیت، رتن جوت آدھ پاﺅ، آدھا کلو سرسوں کے تیل کے ساتھ پکائیں۔ ٹھنڈا کر کے چھان لیں۔ سونے سے پہلے رات کو لکا گرم کر کے جوڑوں پر مالش کر لیں۔

یہ بھی پڑھیں:  نزلہ اور زکام کے علاج کیلئے گھریلو ٹوٹکے

جوڑوں کے درد کیلئے: شہد دو چمچ اور ایک چمچ دار چینی کا قہوہ تیارکر کے پی لیں۔ درد میں آرام آجائے گا۔

شوگر کیلئے: جامن کی گٹھلی آدھا کلو، سائے میں خشک کر لیں۔ کالی مرچ چھٹانک اور گڑمار بوٹی ایک پاو لے کر سوکھی ہوئی گھٹلی کے ساتھ پیس لیں۔ صبح ناشتے سے پہلے اور رات کھانے سے پہلے ایک چمچ لے لیں۔
بھوک بڑھانے کیلئے : ادرک چھوٹا ٹکڑا، پودینہ 9 پتے، چھوٹی الائچی 6 عدد، سونف چٹکی لے کر ان سب کا قہوہ بنالیں اور تھوڑی تھوڑی دیر بعد پی لیں۔

کیسٹرول اور جگر کیلئے: ہرادھنیا، ہراپودینہ، ہری مرچ، لیموں ،سفید زیرہ، لہسن اور ادرک کی چٹنی بنا کر کھانے میں استعمال کریں۔

امراض قلب اور کیسٹرول کیلئے : پان کا پتہ ایک عدد ، لہسن 6جوئے ،پودینہ سبز 4 ٹہنیاں ،ادرک 5 گرام، کو1/2 لیٹر کے پانی میں رات کو بھگو کر کھالیں۔ صبح جوش دیں، ایک کپ رہ جائے تو تین برابرحصوں میں کر کے صبح، دوپہر ،شام پی لیا کریں۔

السر کیلئے: لہسن کا پانی ایک چمچ شہد ملا کر پی لیں۔

دمے کیلئے: (1) لہسن ، لونگ کو ثابت پانی کے ساتھ نگل لیں۔ (2) شہد دو روزانہ کھائیں۔ (3) انگور اور انناس کا رس روزانہ پئیں۔

دمہ کیلئے : ادرک کو پیس کر اس کا پانی ایک چھوٹے چمچ میں ہلکا شہد ملا کر روزانہ لیں۔

ریشہ اور دمہ کیلئے: پیاز کا پانی، ایک چمچ شہد اور چوتھائی چمچ سوڈا بائی کاربونیٹ ملا کر کھائیں۔

دمہ کی الرجی کیلئے: گل بنفشہ مٹھی بھر ایک گلاس کھولتے ہوئے پانی میں ڈال دیں۔ رات بھر پانی میں رہنے دیں اور اس پانی کو تین حصوں میں کر کے ایک حصہ صبح اور باقی دن میں پی لیں۔