pakvszm

پاکستان کی زمبابوے کیخلاف پہلی جیت

EjazNews

راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلے گئے سیریز کے پہلے ایک روزہ میچ میں پاکستان کے کپتان بابر اعظم نے ٹاس جیت کر پہلے خود بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔
پاکستان نے میچ میں فخر زمان کو فائنل الیون کا حصہ نہیں بنایا جبکہ حارث روف نے ڈیبیو کرتے ہوئے اپنا پہلا ون ڈے انٹرنیشنل میچ کھیلا۔
پاکستان کی جانب سے امام الحق اور عابد علی نے اننگز کا آغاز کیا اور ابتدا میں محتاط انداز اپناتے ہوئے ٹیم کو 47 رنز کا عمدہ آغاز فراہم کیا۔
اس اوپننگ شراکت کا خاتمہ اس وقت ہوا جب عابد علی 21 رنز بنانے کے بعد ایل بی ڈبلیو قرار پائے۔

بابر اعظم اور امام نے 42 رنز جوڑ کر اسکور کو 89 تک پہنچایا لیکن اسی اسکور پر بابر 19 رنز بنانے کے بعد مزرگبانی کو وکٹ دے بیٹھے۔
امام الحق اچھی فارم میں نظر آئے اور نصف سنچری اسکور کی البتہ 58 کے انفرادی اسکور پر رن آوٹ کے نتیجے میں ان کی اننگز بھی اختتام کو پہنچی۔
محمد رضوان بھی زیادہ اسکور نہ کر سکے اور 14 رنز بنانے کے بعد چسورو نے ان کی وکٹیں بکھیر دیں جبکہ افتخار احمد بھی صرف 12 رنز بنا سکے۔

یہ بھی پڑھیں:  ٹیسٹ کے دوسرے روز پاکستان کو 198رنز کی برتری

البتہ دوسرے اینڈ سے حارث سہیل نے ذمے دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنی نصف سنچری مکمل کی، لیکن 71 رنز بنانے کے بعد سکندر رضا کو وکٹ دے بیٹھے۔
اس کے بعد فہیم اشرف اور عماد وسیم کی جوڑی نے 42 رنز جوڑ کر ٹیم کی معقول مجموعے تک رسائی کی امیدوں کو زندہ رکھا، فہیم 23 رنز بنا کر آوٹ ہوئے۔
عماد وسیم نے 26 گیندوں پر دو چھکوں اور ایک چوکے کی بدولت ناقابل شکست 34 رنز کی باری کھیلی جس کی بدولت قومی ٹیم مقررہ 50 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 281 رنز بنانے میں کامیاب رہی۔
زمبابوے کی جانب سے بلیسنگ مزرگبانی اور ٹنڈائی سچورو 2، 2 وکٹوں کے ساتھ کامیاب باولر رہے۔

شاہین شاہ آفریدی نے زمبابوے کو شروع میں ہی مشکلات سے دوچار کرتے ہوئے دونوں اوپنرز کو 28 کے اسکور پر پویلین بھیج دیا، تاہم کریگ ایرون نے ٹیلر کا ساتھ دیتے ہوئے ٹیم کو 99 رنز تک پہنچایا جبکہ ان کو عماد وسیم نے حارث روف کے ہاتھوں کچ کروایا، ولیمز 4 رنز کا اضافہ کرکے وہاب ریاض کو وکٹ دے بیٹھے۔
ٹیلر اور ویزلے میڈھویرے نے اپنی ٹیم کو مشکلات سے نکالنے کی بھرپور کوشش کرتے ہوئے اسکور 234 رنز تک پہنچایا لیکن اس موقع پر میڈھویرے کی ہمت جواب دے گئی۔
ویزلے میڈھویرے 61 گیندوں پر 55 رنز بنا کر وہاب ریاض کی گیند پر اوٹ ہوئے جس کے بعد ٹیلر بھی مزید مزاحمت نہیں کرپائے اور ٹیم کو 240 کے اسکور پر چھوڑ گئے۔
ٹیلر نے میچ کی سب سے بڑی اننگز کھیلتے ہوئے 117 گیندوں پر 112 رنز بنائے، جس میں 11 چوکے اور 3 چھکے شامل تھے جبکہ شاہین افریدی نے ان کی وکٹ حاصل کی۔

یہ بھی پڑھیں:  T20ورلڈ کپ کیلئے بھارت نے سکواڈ کا اعلان کر دیا

شاہین شاہ کی جانب سے ٹیلر کو آوٹ کرنے کے بعد زمبابوے کے بلے باز مطلوبہ رفتار سے کھیل جاری رکھنے میں ناکام ہوئے اور سکندر رضا 8، ٹنڈائی چسورو اور بلیسنگ مزرگبانی 5،5 رنز بنا کر اوٹ ہوئے تو زمبابوے کی پوری ٹیم آخری اوور میں 255 رنز پر پویلین لوٹ چکی تھی۔
ٹیلر کی بہترین سنچری اور ویزلے میڈھویرے کی نصف سنچری کے باوجود زمبابوے کی ٹیم 282 رنز کا ہدف حاصل کرنے میں ناکام ہوئی اور میچ 26 رنز سے ہار گئی۔
پاکستان کی جانب سے شاہین شاہ آفریدی اور ویاب ریاض نے شان دار باولنگ کا مظاہرہ کیا اور بالترتیب 5 اور 4 وکٹیں حاصل کیں۔
برینڈن ٹیلر کو شان دار سنچری بنانے پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

واضح رہے پاکستان اور زمبابوے کے درمیان تین ون ڈے میچوں کے ساتھ ساتھ تین ٹی20 میچوں کی سیریز بھی کھیلی جائے گی۔

میچ کے لیے دونوں ٹیمیں ان کھلاڑیوں پر مشتمل تھیں۔
پاکستان: بابر اعظم(کپتان)، امام الحق، عابد علی، حارث سہیل، محمد رضوان، افتخار احمد، فیم اشرف، وہاب ریاض، شاہین شاہ آفریدییدی، حارث روف اور عماد وسیم۔
زمبابوے: چمو چبابا(کپتان)، سکندر رضا، برینڈن ٹیلر، برائن چاری، ٹنڈائی چسورو، کریگ ایرون، ویزلے میڈھویرے، کارل ممبا، بلیسنگ مزرگبانی، رچرڈ نگاروا اور شان ولیمز۔

یہ بھی پڑھیں:  پشاور زلمی نے 6وکٹوں سے میچ جیت لیا