shiblifraz

مسلم لیگ ن نے پیپلزپارٹی کی اور پیپلزپارٹی نے جے یو آئی کی پیٹھ میں چھرا مارا:وزیر اطلاعات

EjazNews

وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز نے کہا ہے کہ چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے الیکشن سے اپوزیشن کے اختلافات اب کھل کر سامنے آچکے ہیں۔مسلم لیگ ن نے پیپلزپارٹی کی پیٹھ میں چھرا گھونپا جبکہ پیپلزپارٹی نے جے یو آئی کو چھرا مارا۔

انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن ایک دوسرے کے ساتھ مخلص نہیں، سینیٹ الیکشن میں ایسا ممکن نہیں تھا کہ بلاول بھٹو یا یوسف رضا گیلانی کو پریذائیڈنگ افسر بنا دیا جاتا۔

وزیر اطلاعات کا کہنا تھا چیئرمین و ڈپٹی سینیٹ کے الیکشن میں جو کچھ ہوا اپوزیشن کو اسے سمجھنا چاہیے اور ان تجربات سے سبق حاصل کرنا چاہیے، اگر کوئی عدالت جانا چاہتا ہے تو ہم اسے روک نہیں سکتے۔

سینیٹ ہال میں لگائے گئے خفیہ کیمروں سے متعلق انہوں نے کہا کہ پولنگ کے روز لگائے گئے ان کیمروں کی شفاف انکوائری کروائی جائے گی۔

وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان نے کہا تھا کہ سینیٹ الیکشن اوپن بیلٹ سے ہونا چاہیے اور ہم نے اس مقصد کے لیے عدالت عظمیٰ اور پارلیمنٹ میں بھی آواز اٹھائی لیکن اپوزیشن نہیں مانی۔

یہ بھی پڑھیں:  اگرکسی کو غلط فہمی ہےکہ کسی کی آمد اور دھرنے سے حکومتیں چلی جاتی ہیں تو ہمارا تجربہ زیادہ ہے

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کی اس بات کی وجہ سب کو معلوم ہے، اگر اپوزیشن والے ہماری بات مان لیتے تو ایسا نہ ہوتا۔

اپوزیشن کے احتجاج کے حوالے سے شبلی فراز نے کہا کہ کوئی لانگ مارچ کرنا چاہتا ہے تو کرے ہمیں کوئی پروا نہیں۔ اس بار ہم انہیں ایک گملا بھی نہیں توڑنے دیں گے۔