ہم اداروں سے ٹکرانا نہیں چاہتے اور اداروں کو بھی چاہیے کہ عوام کے ساتھ نہ ٹکرائیں:مریم نواز

EjazNews

سوات میںجلسے سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کی رہنما مریم نواز نے کہا کہ مریم نواز نے کہا کہ آج سے چند سال پہلے جب آرمی پبلک سکول پر حملہ ہوا تھا، اس وقت پاکستان کی گلی گلی میں روز دھماکے ہوا کرتے تھے، دہشت گردوں نے مسجد، مدرسہ اور کوئی بھی عبادت گاہ، بازار وار محلہ نہیں چھوڑا تھا، نہ بازار محفوظ تھے نہ تھانے کچہریاں محفوظ تھیں۔پولیس افسروں اور شہیدوں نے قربانیاں دے کر پاکستان اور خیبرپختونخوا کا امن بحال کیا تھا، مجھے افسوس ہے کہ اس نالائق اور سلیکٹڈ نے آج اس امن کو بھی داؤ پر لگا دیا ہے۔

پاکستان کو لاحق بڑے بڑے مسائل کا ایک ہی علاج ہے کہ عمران خان اور اس جعلی حکومت کو گھر بھیجو اور اس ملک میں فری اینڈ فیئر نئے الیکشنز کرواؤ اور عوام کے حقیقی نمائندوں کو ان کا اختیار واپس کرو اور ان کا مینڈیٹ دو۔

یہ بھی پڑھیں:  مشتاق احمد نے ایشین لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ حاصل کر لیا

انہوں نے کہا کہ میں اداروں سے کہتی ہوں کہ عمران خان کے پیچھے سے ہٹ جاؤ کیونکہ ہم اداروں سے ٹکرانا نہیں چاہتے اور اداروں کو بھی چاہیے کہ عوام کے ساتھ نہ ٹکرائیں، اس لیے عوام اور اس جعلی عمران خان کے درمیان سے ہٹ جاؤ۔

جب تم ان کے پیچھے سے ہٹ جاؤ گے تو میں آپ کو یقین دلاتی ہوں کہ عمران خان کی جعلی حکومت 24 گھنٹے کی مار نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جس دہشت گردی سے خیبر پختونخوا بہت قربانیاں دینے کے بعد نکلا تھا، دہشت گردی پر بھی پاکستان تقسیم تھا لیکن آپ کے لیڈر نواز شریف نے اپنے سیاسی اختلافات اور دشمنیاں بھلا کر ملک کی خاطر دہشت گردی کی جنگ میں قوم کو یکجا کیا او دہشت گردی کی لعنت سے اللہ تعالیٰ کے فضل و کرم سے قوم کو نجات دلائی۔