maryam_nawaz-protest1

مسلم لیگی کارکنوں اور پنجاب پولیس کے درمیان تصادم کی تصویری جھلکیاں

EjazNews

مسلم لیگ ن اور پنجاب پولیس کے درمیان لاہور میدا ن جنگ بنا رہا ہے۔ یہ ایسی جھڑپیں تھیں جس کے بعد مریم نواز شریف نے باقاعدہ پریس کانفرنس بھی کی اور اپنے تحفظات کا اظہار بھی کیا۔ جس میں ان کا کہنا تھا کہ یہ ان کو نقصان پہنچانے کی کوشش ہے۔

maryam_nawaz-protest3
مظاہرے میں خواتین نے بھی شرکت کی اور یہ مریم نواز کے پلے کارڈ اٹھائے نعرے لگا رہی تھیں
maryam_nawaz-protest4
جھڑپیں جب شروع تو پھر اندازہ کرنا مشکل تھا کہ کیا ہو رہا ہے بس ہر طرف بھاگ دوڑ شروع ہوگئی

ان جھڑپوں میں نیب کو اپنا آفس بھی بند کرنا پڑا اور مریم نواز شریف بغیر کسی پیشی کے واپسی چلی گئیں۔

maryam_nawaz-protest5
پولیس اہلکار بھی خود کو محفوظ رکھ رہے تھے اور حفاظتی شیڈ کے ذریعے پتھروں سے بچنے کی کوشش کر رہے تھے

مریم نواز کا پریس کانفرنس میں کہنا تھا کہ نیب کی جانب سے جاری اعلامیے میں میڈیا کے ذریعے یہ تاثر دینے کی کوشش کی گئی کہ جو زمین میں نے خریدی تھی اس زمین پر قبضہ کیا تھا لیکن نیب کے طلبی کے نوٹس میں کوئی ایسا الزام موجود نہیں تھا۔نیب کی جانب سے جاری نوٹس پڑھ کر سناتے ہوئے ان کا کہنا تھا اس میں الزام کوئی نہیں ہے، بہت مبہم رکھا گیا ہے کیونکہ مجھے بلانا مقصود تھا اور اب میں یہ کہنے میں حق بجانب ہوں کہ مجھے بلانے کے پیچھے مجھے نقصان پہنچانا مقصود تھا کیونکہ آج جو میرے ساتھ سلوک کیا گیا، میں پاکستان کے 72سال میں یہ ہوتے نہیں دیکھا۔

یہ بھی پڑھیں:  میاں حمزہ شہباز کی گرفتاری کے بعد ہائی کورٹ کے مناظر

maryam_nawaz-protest6

وہ مناظر جب پولیس نے آگے بڑھ کر شیلنگ کی

ان کا کہنا تھا آج پرویز رشید صاحب میری گاڑی میں تھے اور جب ون ڈ اسکرین پر حملہ ہوا تو انہوں نے کہا کہ شکر کرو کہ یہ بلٹ پروف گاڑی تھی، اگر یہ بلٹ پروف گاڑی نہ ہوتی تو شیشہ ٹوٹتا اور اس کے بعد پتھر میرے سر پر لگتے کیونکہ میں فرنٹ سیٹ پر بیٹھی ہوئی تھی۔مریم نواز نے کہا کہ اگر یہ بلٹ پروف گاڑی نہ ہوتی تو سامنے سے پولیس کی وردی میں ملبوس افراد جو مجھے نہیں معلوم کہ پولیس کے تھے یا نہیں لیکن وہ پولیس کی یونیفارم میں تھے اور پنجاب پولیس عموماً ایسا نہیں کرتی۔انہوں نے کہا کہ میں نے اپنے ہاتھوں سے موبائل فون پر ویڈیوز بنا لیں اور بطور ثبوت ان ویڈیوز کو ٹوئٹ کردیا۔ انہوں نے کہا کہ اگر گاڑی بلٹ پروف نہ ہوتی تو شیشہ ٹوٹنے کے بعد یہ پتھر مجھے لگتے اور یہ واضح طور پر مجھے جانی نقصان پہنچانے کی کوشش تھی یا شاید میرے سر پر چوٹیں آتی جس میں اس وقت میں ہسپتال میں زیر علاج ہوتی۔

یہ بھی پڑھیں:  HBP-PSL5-شائقین کی محبت دیدنی ہے
maryam_nawaz-protest7
شیلنگ کے بعد دھوئیں کا منظر

ان کا کہنا تھا کہ اس کے بعد انہوں نے مجھے غیرآفیشل ذرائع سے کہنا شروع کیا کہ آپ واپس چلی جائیں لیکن میں نے انکار کردیا، میں نیب کے دروازے کے باہر کھڑی رہی اور میں نے کہا کہ آپ نے مجھے نوٹس پر بلایا ہے تو میں جواب لے کر آئی ہوں۔

maryam_nawaz-protest8
جھڑپ کا منظر
maryam_nawaz-protest2
مسلم لیگی کارکن جشن مناتے ہوئے یہ منظر جھڑپ سے پہلے کا ہے