shah salman

84سالہ سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کا آپریشن کامیاب

EjazNews

شاہ سلمان بن عبد العزیز 2015ء میں سعودی عرب کے بادشاہ بنے ، تقریباً ڈھائی سال تک وہ سعودی عرب کے ولی عہد رہے ہیں اس سے قبل وہ 50سال تک ریاض کے گورنر کے فرائض بھی سرانجام دیتے رہے ہیں۔ 84سالہ شاہ سلمان فرمانروا کو پتے میں تکلیف کے باعث چند روز قبل ریاض کے کنگ فیصل ہسپتال میں داخل کیا گیا تھا۔


خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبد العزیز کے پتے کو نکالنے کا کامیاب آپریشن ہوگیا ہے۔اور ان کی کامیاب سرجری ہوئی ہے۔
شاہ سلمان نے ہسپتال سے ہی کابینہ کے اجلاس کی صدارت کی اور انہوں نے تیمارداری کرنے والوں کا شکریہ ادا کیا اور ان کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

یہ بھی پڑھیں:  30سال تک مصر کے سیاہ و سفید کے مالک رہنے والے حسنی مبارک بھی نہ رہے

یاد رہے جب یہ خبر دنیا بھر میں پھیلی کہ شاہ سلمان ہسپتال میں داخل ہیں تو وزیراعظم عمران خان نے بھی اپنے ایک ٹویٹ لکھا تھا خادم حرمین شریفین عزت مآب سلطان سلمان بن عبدالعزیز کی اسپتال میں داخلےکی تشویشناک خبرموصول ہوئی۔ میں، میری حکومت اور پوری پاکستانی قوم جنابِ سلطان کی جلدشفایابی،عمدہ صحت اور دراز حیات کیلئےکی جانےوالی اپنے سعودی بھائیوں کی دعاؤں میں شریک ہیں۔اللہ کریم یہ دعائیں قبول فرمائیں،آمین
شاہ سلمان کے بیٹے سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے والد کی صحت یابی کیلئے دعا کی اپیل کی تھی۔