ali_sulman

علی سلمان اہلیہ کے قتل کے الزام میں زیر حراست

EjazNews

راولپنڈی پولیس نے صحافی علی سلمان علوی کو اپنی اہلیہ کے قتل کے الزام میں حراست میں لے کرعدالت میں پیش کیا ۔راولپنڈی میں تھانہ ایئر پورٹ میں درج کیے گئے مقدمے میں علی سلمان علوی پر ان کی اہلیہ کے قتل کا الزام عائد کیا گیا ہے۔
وزیراعلیٰ پنجاب کے ڈیجیٹیل میڈیا کے لیے فوکل پرسن اظہر مشوانی نے ٹوئٹر پر علی سلمان علوی کی گرفتاری کی تصدیق کرتے ہوئے ان کے خلاف درج کی گئی ایف آئی آر شیئر کی ہے۔
ایف آئی آرمیں مہوش زہرہ کی مدعیت میں درج کی گئی ہے جس میں لکھا گیا ہے کہ ان کی بہن صدف زہرا کو تشدد کر کے قتل کیا گیا ہے۔ مقدمے میں قتل کا الزام صدف زہرہ کے شوہر علی سلمان علوی پر عائد کیا گیا ہے۔

ایف آئی آر کے مطابق مدعیہ کا کہنا ہے کہ 29 جون کو دن دو بجے ان کو بہن صدف زہرہ کے موبائل فون سے کال آئی اور دوسری جانب ان کے بہنوئی علی سلمان علوی تھے جنہوں نے بتایا کہ میں برباد ہو گیا ہوں۔ مہوش تم جلدی آو¿، صدف نے کچھ کر لیا ہے۔
مدعیہ مہوش کے مطابق وہ اپنی والدہ اور شوہر کو لے کر چکلالہ سکیم تھری کے علاقے سے یوسف کالونی پہنچیں جہاں علی سلمان علوی اپنے گھر کے مرکزی دروازے پر کھڑے تھے۔وہ ہمیں میری بہن کے کمرے میں لے گئے جہاں چھت والے پنکھے سے صدف زہرہ کی لاش لٹک رہی تھی۔
ایف آئی آر کے مطابق مدعیہ نے علی سلمان کی مدد سے صدف زہرہ کی لاش کو نیچے اتارا۔ مہوش زہرہ نے پولیس کو بتایا کہ ان کے بہنوئی علی سلمان ان کی بہن صدف پر تشدد کرتے تھے اور کئی مرتبہ مارا پیٹا جس پر ان کو بہت سمجھایا لیکن وہ باز نہیں آئے۔
ایف آئی آر درج کراتے ہوئے مدعیہ مہوش زہرہ نے لکھا ہے کہ ان کو قوی یقین ہے کہ ان کی بہن کو علی سلمان علوی نے قتل کیا اور پولیس اس کے خلاف قانونی کارروائی کرے۔
راولپنڈی کی تھانہ ایئرپورٹ پولیس نے ملزم علی سلمان کے خلاف زیر دفعہ 302 تعزیرات پاکستان قتل کے الزام میں مقدمہ درج کر کے گرفتار کیا ہے اور مقامی عدالت سے ان کا جسمانی ریمانڈ حاصل کیا ہے تاکہ تفتیش کی جا سکے۔

یہ بھی پڑھیں:  کراچی کنگز نے ملتان سلطانز کو 7رنز سے شکست دے دی