imran-khan-kashmir

صدق دل سے نواز شریف کی صحت یابی کیلئے دعا گو ہوں:وزیراعظم عمران خان

EjazNews

سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کی صحت کو لے کر ایک گہری تشویش پائی جارہی ہے۔یہ تشویش نہ صرف اپوزیشن میں بلکہ حکومتی حلقوں میں پائی جارہی ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے ایک ٹویٹ کیا جس میں انہوں نے لکھا ،سیاسی اختلافات اپنی جگہ، میں صدق دل سے نواز شریف کی صحت یابی کیلئے دعاگو ہوں۔ انہیں علاج معالجے کی بہترین ممکنہ سہولیات فراہم کرنے کیلئے میں تمام متعلقہ حکام کو ہدایات دے چکا ہوں۔
جبکہ ان ہی کی وزیر نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف نے بیرون ملک جانے کی خواہش کا اظہار نہیں کیا ان کے حوالے سے ہمارے دل میں کوئی میل نہیں اور میری ہمدردیاں میاں صاحب کے ساتھ ہیں۔ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا پلیٹ لیٹس کم ہونے کی کئی وجوہات ہیں اور وہ اچانک بھی کم ہونا شروع ہو جاتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ شہباز شریف کی موجودگی میں وزیراعظم عمران خان کی جانب سے نواز شریف کی عیادت کی ہے۔ وزیر اعظم کا نیک تمناؤں کا بیان بھی پہنچایا ہے۔
دوسری جانب ہسپتال ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا گیا ہے کہ نوازشریف کو ”اکیوٹ آئی ٹی پی“ کا مرض لاحق ہے اور اس کا علاج بھی پاکستان میں ممکن ہے جبکہ نوازشریف کا علاج شرو ع بھی کیا جا چکا ہے۔
نوازشریف کے بون میرو فنکشنل ہیں اور اس حوالے سے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔
میاں نوازشریف کو تین روز قبل پلیٹ لیٹس میں شدید کمی کے باعث ہنگامی بنیادوں پر سروسز ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں انہیں اب تک پلیٹ لیٹس کے چار سے زائد میگا یونٹ لگائے جاچکے ہیں اور بیماری کی تشخیص میں کافی مشکل رہی لیکن اب ان کی بیماری کو پہچان لیا گیا ہے اور علاج بھی شروع کر دیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  وہی ہوا جس کا ڈر تھا