cricket world cup

کرکٹ ورلڈ کپ2019،جو بھی جیتے تاریخ ضرور رقم ہوگی

EjazNews

نیوزی لینڈ اور انگلینڈ کے درمیان کھیلے جانے والا ورلڈ کپ 2019ءلندن کے تاریخی سٹیڈیم لارڈز میں کھیلا جائے گا۔ یہ بھی بات اپنی جگہ تاریخ کا حصہ ہے ان دونوں ٹیموں میں سے جو بھی جیتی کی وہ پہلی دفعہ ورلڈ کپ چیمپیئن بنے گی۔ ورلڈ کپ کی دوڑ میں انگلینڈ اور نیوزی لینڈ کئی مرتبہ شریک ہوئے مگر بد نصیبی یا قسمت کا ساتھ نہ دیناکہ یہ کبھی ورلڈ کپ نہیں جیت سکیں۔ انگلش ٹیم اب تک 3ورلڈ کپ کے فائنل کھیل چکی ہے جبکہ نیوزی لینڈ کا یہ نیوزی لینڈ کا یہ دوسرا فائنل ہوگا۔
اگر دونوں ٹیموں کی کارکردگی کا جائزہ لیا جائے تو انگلینڈ اور نیوزی لینڈی کے درمیان با تک 90میچ کھیلے گئے ہیں جن میں سے 43 نیوزی لینڈ نے جیتے ہیں جبکہ ورلڈ کپ 2019ء میں اپنے اپنے پول میں کھیلے گئے میچوں میں نیوزی لینڈ نے پانچ اور انگلینڈ نے چار میچ جیتے ہیں۔
ورلڈ کپ کے میزبانوں نے جنوبی افریقہ کے خلاف جیت سے ایونٹ ک ا آغاز کیا، اگلے ہی میچ میں انہیں پاکستان سے شکست کی کڑوی گولی نگلنا پڑی، پاکستان کے بعد سری لنکا اور پھر کینگروز یعنی 3میں یہ ہارے اور 12پوائنٹ حاصل کیے۔ سیمی فائنل میں روایتی حریف آسٹرلیا کو دوسریے سیمی فائنل میں ہرا کر اعزاز کے دفاع سے محروم کرد یا۔ 1992ء یعنی 27سال بعد فائنل ٹکٹ پانے والی انگلش ٹیم نے چوتھی مرتبہ فیصلہ کن مقابلے میں شرکت کا اعزاز حاصل کیا ہے۔
اگر نیوزی لینڈ کی جانب دیکھاجائے تو وہ اس ٹورنامنٹ کی خوش نصیب ٹیم ہے کیونکہ کئی مرتبہ لندن کی بارشوں نے اس کی امیدوں پر پانی پھیرنے کی کوشش کی لیکن بالآخر وہ بارش ہی رحمت کا باعث بنی۔ کیویز دوسری بار فائنل میں پہنچے ہیں۔ نیوزی لینڈ نے سری لنکا کے خلاف پہلی کامیابی سمیٹی، کیویز ،پاکستان ، آسٹریلیا اور انگلیڈ سے ہارے جبکہ بھارت کے خلاف میچ بارش کی وجہ سے ن ہ ہو سکا ۔ اس کے ایک پوائنٹ کی بدولت چوتھی سیمی فائنل میں پہنچے ۔ فائنل میں فیورٹ کہلائی جانے والی انڈین ٹیم سے مقابلہ ہوا، بارش کے باعث اس ونڈ ے کا فیصلہ دوسرے روز پر گیا جس میں دو مرتبہ عالمی کپ جیتنے والی بھارتی ٹیم کا غرور کیویز کے ہاتھوں مٹی میں مل گیا۔ اور یوں آج فائنل کیویز اور انگلینڈ کے درمیان کھیلا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں:  مقبوضہ کشمیر میں انسانیت تڑپ رہی ہے، کیا دنیا جان بوجھ کر خاموش ہے؟