tax emencity

اثاثے ظاہر کرنے کا آج آخری موقع ہے

EjazNews

جن لوگوں کے پاس غیر قانونی اثاثے ہیں ۔ آج ان کیلئے آخری روز ہے کہ وہ اس کو ظاہر کر دیں ۔اب تک اس سکیم سے فائدہ اٹھانے والے افراد ایک لاکھ سے تجاوز کر چکے ہیں اور ملکی معیشت کو 45ارب کا فائدہ پہنچ چکا ہے۔ایف بی آر واضح طورپر کہہ چکی ہے کہ اس سکیم میں توسیع نہیں کی جائے گی ۔
یاد رہے اس سکیم سے کوئی سرکاری عہدے دار فائدہ نہیں اٹھا سکتا حکومت کے نزدیک سرکاری عہدیدار کے پاس ناجائز پیسے کرپشن کے ہوتے ہیں ، یہ سکیم کاروباری لوگوں کو تحفظ دینے کیلئے ہے۔
واضح رہے اس سکیم میں مزید توسیع کی گنجائش اس لیے بھی نہیں ہے کہ اگر آئی ایم ایف کا بورڈ آج پاکستان کے لیے قرض کی رقم کی اجازت دے دیتا ہے تو اگلے تین سال تک ایسی کوئی سکیم حکومت جاری نہیں کر سکتی۔

ایمنسٹی سکیم کے تحت جن لوگوں نے اپنے اثاثے ظاہر کیے ہیں ان کی حتمی تفصیلات تو منظر عام پر نہیں آئیں البتہ کچھ ذرائع سے معلومات اکٹھی کرنے پر معلوم ہوا کہ ایمنسٹی سکیم سے فائدہ اٹھانے والوں میں سرفہرست وہ لوگ ہیں جن کی دبئی میں جائیدادیں ہیں اور خزانے میں جمع ہونے والی رقم 45ارب سے تجاوز کر چکی ہے۔
پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ 20لاکھ سے زائد لوگوں نے اپنے گوشوارے جمع کروائے ہیں جو اپنی جگہ ایک ریکارڈ ہے۔ دوسری جانب عرب دنیا کے معتبر اخبار خلیج ٹائمز نے بھی دعویٰ کیا ہے کہ پاکستانیوں نے 10کھرب کے اثاثے ظاہر کیے ہیں۔
آج 3جولائی کو ایمنسٹی سکیم کا آخری دن ہو گا۔اگر اس میں مزید توسیع نہ کی گئی تو اس کے بعد بے نامی جائیداوں کا کمیشن حرکت میں آئے گا۔ اس کمیشن کا اعلان گزشتہ روز مشیر خزانہ نے اپنی پریس کانفرنس سے کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  لاہور کے مال روڈ پر اب موٹر سائیکلوں کا ٹریک علیحدہ