zaheen tahira

سینئر اداکارہ ذہین طاہرہ کو تو نشریاتی اداروں نے مار ہی دیا تھا

EjazNews

گزشتہ کئی دنوں سے پاکستان کے نشریاتی اداروں میں سینئر اداکارہ ذہین طاہرہ کے فوت ہونے کی خبریں چل رہی تھیں۔ پتہ نہیں کس نے کہاں سے تصدیق کر کے یہ خبر چلائی ۔ وہ دل کی بیماری میں مبتلا تھیں جس کی وجہ سے انہیں ہسپتال داخل کرایا ۔ ایک وقت ایسا بھی آیا کہ انہیں وینٹی لیٹر پر منتقل کیا گیا اور اسی وقت بغیر تصدیق کے ان کے فوت ہونے کی خبریں چلنی شروع ہو گئیں۔ اب بھلا ہو آغا خان ہسپتال کے ڈاکٹروں اور ذہین طاہرہ کے خاندان والوں کا جو منظر عام پر آئے اور اس بات کو واضح کیا کہ وہ ہسپتال میں داخل ہیں ، ان کی حالت بہتر ہے۔ گزشتہ کئی دنوں سے ڈاکٹر ان کی حالت کو پیش نظر رکھتے ہوئے کسی سے ان کی ملاقات کی اجازت نہیں دے رہے تھے۔سینئر اداکارہ نے سات سو سے زائد ڈراموں میں کام کیا ہوا ہے۔
مجھے یاد پڑتا ہے کہ ماضی میں بھی اسی طرح پاکستان کے ایک بڑے ادارے نے اداکارہ نور جہاں کے مرنے پر ایڈیشن شائع کر دیا تھا لیکن بعد میں پتہ چلا کہ نور جہاں زندہ ہیں اور اس کے کئی سال بعد تک زندہ رہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  تامل فلم ساہو کے ایکشن سسٹنٹ کسی ہالی وڈ فلم سے کم نہیں