child with father death

زندگی آسان بنانے کی کوشش میں زندگی سے ہی ہاتھ دھو بیٹھے

EjazNews

یوں ہی نہیں کہتے تارکین وطن کیلئے زندگی بڑی مشکل ہے۔ امریکی سرحد پر دل دہلا دینے والا ایسا واقعہ پیش آیا جس نے پوری دنیا کی توجہ حاصل کی اور سب کو ایک مرتبہ ہلا کر رکھ دیا۔ جس انسان میں دل ہے اس کے دل سے آہ نکلی۔ اچھے مستقبل کے لیے امریکہ میں ناجائز طور پر داخل ہونے کی کوشش کرنے والا باپ اور اس کے بچے کی لاش مردہ دیکھ کر جہاں دنیا کے کروڑوں حساس افراد کو اپنے بچے یاد آنے لگے تھے۔
یہ لاشیں وسطی امریکا کے ملک ایل سلواڈور کے مہاجر والد اور بیٹی کی ہے۔25سالہ ایل سلواڈور اپنی 2 سالہ بچی کے ساتھ مستقبل محفوظ بنانے کے لیے میکسیکو کے راستے امریکا میں داخل ہونے کی کوشش کے دوران سرحد پر پانی کی لہروں میں چل بسا۔
یہ دریا میں بہہ کر امریکہ ریاست ٹیکسال میں داخل ہونے کی کوشش کر رہا تھا لازمی طور پر بچی کو پانی کی لہروں سے بچانے کیلئے اس کا منہ اپنی شرٹ کے اندر چھپایا ہوگا لیکن قدرت کو کچھ اور ہی منظور تھا ۔ خوش قسمتی سے بچی کی والدہ کو ایک چٹان کا سہارا مل گیا جس سے وہ اپنی جان بچانے میں کامیاب ہو گئی۔

یہ بھی پڑھیں:  برطانیہ کے لندن برج پر آخر چاقو بردار نے لوگوں پرحملہ کیوں کیا؟