مہاجر

گزشتہ 20برسوں میں تارکین وطن کی تعداد دگنی ہو گئی ہے: اقوام متحدہ

EjazNews

اقوام متحدہ کے کمیشن براے پناہ گزین کی جاری کر دہ رپورٹ کے مطابق 2018 میں 7کروڑ سے زیادہ انسانوں کا بطور مہاجر اندراج عمل میں آیا مگر یہ تعداد حقیقی تعداد سے کہیں کم ہے۔ اپنی سالانہ رپورٹ میں کمیشن کا کہنا کہ وینزویلا میں بحران کے سبب فرار ہونے والے افراد کی تعداد کا مکمل طور پر شمار نہیں کیا جاسکا ۔ جبکہ 2017ءکے اختتام پر بھی تشدد کے سبب اپنے گھروں کو چھوڑنے پر مجبور ہونے والے افراد 6.85کروڑ تھی۔
کمیشن کی جاری کر دہ رپورٹ کے مطابق ایتھوپیا اور وینزویلا کے بحران کے سبب یہاں خوراک اور دواﺅں کی قلت کے باعث ہزاروں کی تعداد میں انسان ہجرت کر رہے ہیں۔ 2016ءسے صرف وینزویلا سے فرار ہونے والے افراد کی تعداد 33لاکھ ہے۔ اس رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں ہجرت کرنے والے افراد کی تعداد گزشتہ 20برسوں میں دگنی ہو گئی ہے۔
پاکستان میں افغان پناہ گزینوں ، بنگلہ دیش میں میانمارجرمنی میں شام کے پناہ گزینوں کی تعداد بھی خاصی تعداد میں ہے۔ دنیا کے بڑھتے ہوئے بحرانوں ، جنگل و جدل نے دنیا میں رہنے والے انسانوں کو مہاجر بننے پر مجبور کردیا ہے۔ کہیں پر جنگ تھوپ دی جاتی ہے تو کہیں پر مذہبیت کے نام پر گلے کاٹ کر ہجرت پر مجبور کیا جاتا ہے۔ اقوام متحدہ کی جاری کردہ رپورٹ ان مہاجرین کی ہے جو رجسٹرڈ ہیں ان میں وہ شامل نہیں ہیں جو رجسٹرڈ نہیں ہوئے اور ان کی تعداد شاید بہت زیادہ ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  86برس بعد آیا صوفیہ مسجد میں نماز جمعہ کی ادائیگی