al haram

مسجد الحرام کی فضیلت

EjazNews

مسجدالحرام و ہ عالی شان عمارت ہے جس کے بیچ میں بیت اللہ شریف واقع ہے ۔آبادی کے لحاظ سے حرم شریف تقریباً شہر کے وسط میں واقع ہے۔ گزشتہ زمانے میں روشنی کے لئے بلوری قندیلیں لٹکی ہوئی تھیں جن میں روغن زیتون جلایا جاتا تھا ۔مگر اب برقی روشنی ہے۔ قرآن مجید میں مسجد ا لحرام کا متعدد جگہ ذکر آیا ہے۔
ترجمہ: نماز میں مسجد الحرام کی جانب اپنے منہ کو پھیرو ۔ (البقرہ)
ترجمہ: اے ایمان والو! مشرک یقینا ناپاک ہیں اس سال کے بعد سے مسجد الحرام کے قریب بھی نہ آئیں ۔ (التوبہ)
ترجمہ: یقینا اللہ اپنے رسول کے خواب کو سچا کر دے گا اگر خدا نے چاہا تم ضرور مسجد الحرام میں امن کے ساتھ داخل ہو گے ۔ (الفتح)
ترجمہ: وہ خدائے پاک ہے جو اپنے بندے کو مسجد الحرام سے راتوں رات لے گیا۔ (الاسرآئ)
ترجمہ: مسجد الحرام کے پاس جنگ مت کرو ۔ (البقرہ )
ترجمہ: جن لوگوں نے کفر کیا اور جو اللہ کے راستہ اور مسجد الحرام سے روکتے ہیں ۔ وہ مسجد الحرام جس میں وہاں کے مقیم اور باہر کے سب لوگوں کے برابر کیا ہے۔
حدیثوں میں بڑی فضیلت بیان کی گئی ہے۔ دنیا میں مسجد الحرام سے افضل کوئی مسجد نہیں ہے۔ یہاں کی ایک نیکی دوسری جگہ کی لاکھ نیکی کے برابر ہے۔ حضرت ابن عباس ؓ فرماتے ہیں حرم کی ایک نیکی لاکھ نیکیوں کے برابر ہے۔ (طبری)
رسول اللہ ﷺ نے فرمایا:
ترجمہ : آدمی اپنے گھر میں نماز پڑھے تو صرف ایک ہی نماز کا ثواب ملتا ہے اور محلہ کی مسجد میں 25نمازوں کا اور جامع مسجد میں 50نمازوں کا اور بیت المقدس میں 50ہزار نمازوں کا اور میری مسجد میں 50ہزار نمازوں کا ثواب اور مسجد الحرام لاکھ نمازوں کا ثواب ملتا ہے۔
ایک روایت میں ہے کہ اللہ تعالیٰ ہر رات کو زمین والوں کی طرف توجہ فرماتا ہے۔ سب سے پہلے مسجد الحرام والوں پر نظر پڑتی ہے جو طواف میں مشغول ہوتے ہیں ان کی مغفرت کر دی جاتی ہے اور جوب یت اللہ کے دیدار میں مصروف ہوتے ہیں ان کی بھی مغفرت کر دی جاتی ہے۔(طبری)
حضرت مولانا عبد السلام بستوی دہلوی

یہ بھی پڑھیں:  حطیم اور مطاف کا بیان