ضلعی انتظامیہ کی جانب سے جنوبی وزیر ستان میں دفعہ 144نافذ

EjazNews

خیبر پختونخوا کے ضلع جنوبی وزیرستان میں امن و امان کی صورتحال کو برقرار رکھنے کیلئے دفعہ 144نافذ کر دی گئی ہے۔جنوبی وزیرستان میں تمام تراجتماعات، ریلیوں، جلوسوں اور قابل اعتراض تقریروں کی فراہمی پر مکمل پابندی ہوگی۔
ضلعی انتظامیہ نے ضلع میں ہر قسم کے ہتھیار کی نمائش، ہوائی فائرنگ، اور ہتھیار کو ساتھ لے کر چلنے پر پابندی عائد کر دی ہے۔ اس پابندی کے دوران گاڑیوں میں کالے شیشے کے استعمال پر بھی پابندی ہے۔
گزشتہ دنوں جنوبی وزیرستان میں ہونے والے افسوسناک واقعہ کے بعد یہ پابندی عائد کی گئی ہے جس میں پاک فوج کی چوکی پر حملہ کیا گیا تھا۔ اس افسوسناک واقعہ میں محسن داوڑ اور علی وزیر کا نام سامنے آیا جو کہ بذات خود ممبر اسمبلی ہیں۔ خاڑ کمر چیک پوسٹ پر حملے میں پانچ جوان زخمی ہوئے تھے جبکہ تین حملہ آور ہلاک ہوئے۔
اس حملے کے بعد علی وزیر کو8ساتھیوں سمیت گرفتار کر لای گیا تھا جبکہ محسن داوڑ فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا۔
یاد رہے قبائلی اضلاع کی 16نشستوں پرانتخابا 2جولائی کو ہونے جارہے ہیں ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  گزشتہ 10برسوں میں لیے گئے قرضوں کی انکوائری شروع