جج کو کرسی مارنے کے جرم میں وکیل 18سال کیلئے پابند سلاسل

EjazNews

فیصل آباد کی تحصیل جڑانوالہ میں 25اپریل کو معمولی تلخ کلامی ہوئی جس پر وکیل نے غصے میں آکر جج کو کرسی دے ماری جس سے معزز جج کا سرپھٹ گیا۔ ایف آئی آر کے اندراج کے بعد ایڈووکیٹ عمران منج کو گرفتار کیا گیا ۔ جن کیخلاف انسداد دہشت گردی کی عدالت میں مقدمہ چلا گیا۔اس واقع کے بعد ججز نے ہڑتال بھی کی تھی۔
انسداد دہشت گردی کی عدالت نے اس کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے ملزم ایڈووکیٹ عمران منج کو 18سال 6ماہ کی قید کا حکم سنایا ہے۔ اس کے علاوہ ملزم کو ڈھائی لاکھ روپے جرمانے اور ہر جانے کی صورت میں بھی ادائیگی کرنا ہوگی۔

یہ ایف آئی آر سزا پانے والے وکیل کیخلاف کٹائی گئی تھی
یہ بھی پڑھیں:  مریم نواز کے عدالتی ریمانڈ میں14روز کی توسیع