کیکڑا ون میں گیس کے ذخائر نہ مل سکے

EjazNews

وزیراعظم عمران خان نے شوکت خانم فنڈ ریزنگ میں خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ایک ہفتے کے اندر نتائج سامنے آئیں گے اور تقریب میں بیٹھے تمام لوگ دو نفل کی نیت کریں۔ لیکن اس بات کے ایک گھنٹہ بعد ٹی وی کی سکرین پر کیکڑا ون میں گیس کے ذخائر نہ ملنے کی خبریں نشر ہونا شروع ہو گئیں۔ یہ اپنی جگہ اہم بات ہے کہ جب ملک کا وزیراعظم کہہ رہا ہے کہ ذخائر کا پتہ ہفتے بعد چلے گا ۔ وہیں پر معاون خصوصی وزیراعظم سے پہلے میڈیا پر یہ خبر نشر کروا رہے ہیں کہ گیس کے ذخائر نہیں ملے۔

وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ندیم عالم کے مطابق گہرے سمندر میں ڈرلنگ کے دوران تیل کے ذخائر نہ مل سکے۔جیو نیوز سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ کیکڑا ون پر 55سو میٹرسے زیادہ گہرائی تک ڈرلنگ کی گئی تاہم ذخائر نہ ملنے پر اب ڈرلنگ روک دی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  ’’احساس‘‘پروگرام کے تحت کسانوں کو بلا سود قرضے ملیں

کیکڑا ون کے مقام پر اٹلی کی کمپنی ای ایل آئی ۔ امریکی کمپنی ایگزون موبل۔ او جی ڈی سی اور پیپی۔ایل کام کر رہی تھی۔

ڈرلنگ کے منصوبے پر لاگت کا تخمینہ 10 کروڑ ڈالر سے زائد کا بتایا جا رہا ہے۔