کیا امیر مقام کے بیٹے کی گرفتاری سیاسی انتقال ہے؟

EjazNews

نیب نے گزشتہ روز شانگلہ الپوری روڈ تعمیر میں مبینہ کرپشن کیس میں ایف آئی اے خیبر پختونخوا نے ن لیگی رہنما امیر مقام کے بیٹے کو گرفتار کیا تھا۔ کرپشن کیس میں امیر مقام کے بیٹے کی گرفتاری پر ن لیگ تلملا اٹھی، سابق وزیراعظم نے گرفتاری کو سیاسی انتقامی کارروائی قرار دیا اور اس گرفتاری کی شدید مذمت بھی کی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ 18سیملپز لیے گئے جن میں 14بالکل درست یں لیکن چار سا ل بعد یہ سب کرنا بھی غیر قانونی ہے۔ سڑک کا ٹھیکہ سال 2009کا ہے شکایت یا تکلیف وزیر کو ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ایف آئی اے کے مطابق تین کروڑ کا کام غلط ہوا، کام غلط ہونا کرپشن نہیں ہے، کام غلط ہوا تھا تو این ایچ اے نے چار سال تک شکایت کیوں نہیں کی، فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی کی جانب سے گزشتہ روز ایک پرچہ درج کیا گیا جس میں امیر مقام کو ملوث کرنے کی کوشش کی گئی اور پھر آج بیٹے کو گرفتار کرلیا۔ہم اس کو سیاسی انتقال نہ کہیں تو کیا کہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر معاملہ تین کروڑ روپے کی شکایت کا ہے تو ٹھیکیدار کی بینک گارنٹی سے پیسے نکال لیں لیکن وزراء سیاسی انتقال میں مصروف ہیں اور اداروں کو سیاسی انتقال کے لیے استعمال کیا جارہا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  ملزم حکومت اورعوام کو دھوکا دے کر گیا ہے:اسلام آباد ہائیکورٹ