آئے روز کے ٹریفک حادثات لمحہ فکریہ ہے!

EjazNews

کیا ملک میں آئے روز کے ٹریفک حادثات رکنے پائیںگے یہ سوال ہمیشہ ہمارے ذہن میں رہتا ہر اسوقت جب ایک نیا حادثہ ہوتا ہے۔ نہ یہ حادثات رکنے کا نام لے رہے ہیں اور نہ ہی ہماری آگاہی کی باتیں کم ہونے کا نام لے رہی ہیں۔ اگر کسی کے کان پر جونہیں رینگتی تو وہ ہیں ارباب اختیار ۔ کیونکہ نہ تو انہوں نے پبلک ٹرانسپورٹ میں کبھی سفر کیا ہوتا ہے اور نہ ہی کرنا ہے۔ بڑی بڑی عالیشان گاڑیوں میں گھومنے والوں کو کیا پتہ کہ گاڑیوں کی سیٹوں کے نیچے سلنڈر رکھے جاتے ہیں اور ایک نہیں کئی کئی سلنڈر رکھے جاتے ہیں جو کسی چھوٹے حادثے کو بھی بڑا بنا دیتے ہیں۔ کیونکہ ان سیلنڈر کے اوپر سیٹ ہوتی ہے اور سیٹ پر بیٹھی سواری سب سے پہلے ان سیلنڈرز سے متاثر ہوتی ہیں۔ ایسا ہی ایک افسوسناک واقعہ آج کشمور میں پیش آیا۔
موصولہ اطلاعات کے مطابق کشمور کے قریب وین میں سلنڈر پھٹنے سے آگ لگ گئی جس کے نتیجے میں وین میں سوار 2خواتین ،2بچوں سمیت 5افراد زندہ جل کر جاں بحق ہو گئے جبکہ اس واقعہ میں 10افراد زخمی بھی ہوئے ہیں جنہیں طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق متاثرہ وین کندھ کوٹ سے کشمور جارہی تھی کہ ٹول پلازہ کے قریب اس میں اچانک آگ بھڑک اٹھی۔

یہ بھی پڑھیں:  نیوزی لینڈ کو جیتنے کیلئے صرف306 سکور بنانا ہوگا

گزشتہ دنوں سوہاوا کے قریب بھی ایک ایسا ہی حادثہ رونما ہوا تھا جس کے نتیجے میں 8افراد زندہ جلس کر راکھ بن گئے تھے۔ اسی طرح ملک میں آئے روز کوئی نہ کوئی واقعہ ہوتا رہتا ہے جو لمحہ فکریہ ہے۔ ان حادثات میں بڑوں کے علاوہ چھوٹے بچے بھی ان حادثات کے شکار ہوئے ہیں۔ لیکن کریں کیا نہ تو موجودقوانین پر عمل کرایا جاتا ہے اور نہ ہی چیک اینڈ بیلنس کا کوئی سسٹم ہے اگر ہے تو جیب میں سنبھال کر رکھا ہوا ہے کہیں کسی کو نظر نہ آجائے۔

اگر ہم ملک بھر سے اعداد و شمار اکٹھے کر کے آپ کے سامنے رکھیں تو یقین جانئے آپ کے رونگھٹے کھڑے ہوجائیں گے کہ اس قدر ہمارے ملک میں حادثا ت ہوتے ہیں اور اس کے باوجود ہم اپنا ٹریفک کا نظام درست کرنے کی طرف توجہ نہیں دے رہے۔