Sir lanka Blast

سری لنکا میں مختلف مقامات پردھماکے

EjazNews

سری لنکا میں ایسٹر کے موقع پر 3گرجا گھروں اور 3ہوٹلوں میں دھماکوں کی اطلاعات ہیں۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق دھماکوں میں 200سے زائد افراد ہلاک جبکہ5سو سے زائد زخمی ہیں۔ یہ دھماکے اس وقت کیے گئے جب لوگ ایسٹر کی عبادات میں مصروف تھے۔جبکہ شنگریلا،سینیمون گرینڈاور کنگزبرے ہوٹل بھی دھماکوں سے گونج اٹھے۔ اطلاعات کے مطابق 20سے زائد غیر ملکی بھی اس دھماکوں میں زندگی کی بازی ہار گئے ہیں۔ملک میں کرفیو لگا دیا گیا ہے۔
یاد رہے آج دنیا بھر میں مسیحی برادری ایسٹر کا تہوار منا رہی ہے۔ ایسٹر عیسائیوں کیلئے ایک مقدس دن ہے جسے وہ پوری عقیدت اور احترام سے مناتے ہیں۔
دفتر خارجہ کےترجمان نے اپنے بیان میں سری لنکا میں ہونے والوں دھماکوں کی شدید مذمت کی ہے اور قیمتی جانوں کے نقصان پر اظہار افسوس کیا ہے۔ اور اس مشکل گھڑی میں حکومت سری لنکا کو یقین دلایا ہے کہ پاکستان ان کے ساتھ کھڑا ہے۔ پاکستانی ہائی کمیشن کولمبو کی جانب سے ایک نمبر بھی جاری کیا گیا ہے جن لوگوں کے پیارے سری لنکامیں موجود ہیں وہ ان کی خیریت نمبر سے معلوم کر سکتے ہیں۔
یاددہانی کیلئے بتاتے چلیں کہ پاکستان وہ ملک ہے جس نے سری لنکا کو ہر مشکل میں سہارا دیا ۔وہاں پر مقامی دہشت گردی نے سری لنکا کو ایک عرصے تک استحکام میں نہیں آنے دیا وہاں پر دہشت گردی کا خاتمہ پاکستان حکومت کی مدد سے ہی سری لنکا نے کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  جدہ میں حرمین ریلوے سٹیشن میں آتشزدگی؟

وزیراعظم عمران خان نے سری لنکا میں ہونے والے دھماکوں کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ اور سری لنکا سے اظہار ہمدردی کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان پوری طرح سری لنکا کی اس مشکل گھڑی میں اس کے ساتھ کھڑا ہے

وزیراعظم عمران خان کا ٹویٹر پر جاری کر دہ بیان
ٹویٹر پر جاری کردہ ڈاکٹر فیصل کا بیان اور پاکستانی ہائی کمیشن کولمبو کی جانب سے جاری کردہ نمبرز

اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف نے اپنے ایک ٹویٹ بیان میں سری لنکا میں ہونے والی دہشت گردی کی مذمت کی ہے۔ ان کا اپنے بیان میں کہنا تھا کہ اس دکھ کی گھڑ یمیں ہم حکومت سری لنکا اور عیسائی برادری کے ساتھ کھڑ ے ہیں۔

میاں شہباز شریف کا جاری کردہ بیان