fawad ch

بڑی کمپنیوں کو گیس کنکشن دینے سے عوام کو نقصان ہوا: وزیراطلاعات و نشریات

EjazNews

گیس چوری میں بڑے لوگوں کا نام بھی آئے گا یہ پورا نیٹ ورک ہے

کابینہ اجلاس کے اختتام پر وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات نے میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ کابینہ اجلاس کے آغاز میں نیوزی لینڈ کے شہداء کے لیے فاتحہ کی گئی، کابینہ نے نیوزی لینڈ میں دہشت گردی کی شدید مذمت کی ہے۔ ایک سازش کے تحت مسلمانوں کے خلاف نفرت پھیلائی گئی، تمام مذاہب کے لوگوں کو ایک دوسرے کے نقطہ نظر کو سمجھنا چاہئے، وزیر اطلاعات نے بتایا کہ کابینہ نے لائیو سٹاک کے شعبے کو ترقی دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ آئندہ 5سالو ں میں حکومت کی خصوصی توجہ زراعت پر رہے گی، حکومت لائیو سٹاک اور فشریز کے شعبے میں کام کرنا چاہتی ہے، آئل سیڈز کی پیداوار کے لئے بھی اقداما ت کر رہے ہیں۔ خوردنی تیل کا استعمال کرنے کیلئے آگہی مہم چلائی جائے گی۔گیس بحران سے متعلق فواد چوہدری نے کہا کہ 2016-17 سے صارفین کو گیس کے اضافی بلز بھیجے جارہے ہیں ، گیس کے اضافی چارج سے 32لاکھ بلز میں اووربلنگ ہوئی، گیس بل اضافے سے متعلق تحقیقات جارہی ہیں۔ حکومت گیس صارفین کو اضافی ڈھائی ارب روپے واپس کرے گی، گیس چوری میں بڑے لوگوں کا نام بھی آئے گا، یہ پورا نیٹ ورک ہے۔ بڑی کمپنیوں کو گیس کنکشن دینے سے عوام کو نقصان پہنچ رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ متعلقہ محکموں کو بار بار تلقین کی ہے کہ معاشی حالات کا احساس کریں، بیوروکریٹس کو بھی اپنی ذمہ داری کا احساس کرنا ہوگا، نیشنل آئی ٹی بورڈ کا از سر نو جائزہ لینے کا فیصلہ کیا گیا۔حکومت کو ڈیجیٹل کرنے کا ایک روڈ میپ دیا جائے گا۔ پاکستان میں اس وقت مشکل معاشی حالات ہیں، وزیراعظم اخراجات محدود کرنے پر زور دے رہے ہیں، ڈیٹ پالیسی کو آرڈی نیشن آفس کے ڈی جی عبد الرحمن وڑائچ ہوں گے۔ وزارتوں کے ذیلی اداروں کے سربراہان کی تقرریوں کا طریقہ کار طے کرلیا گیا ہے۔
وزیراطلاعات نے بریفنگ میں مزید بتایا کہ اجلاس میں سرکاری جائیدادوں کے حوالے سے بھی بات ہوئی، سرکاری جائیدادوں کی فروخت کیلئے ٹاسک فورس قائم کی گئی ہے، اس کے علاوہ نیشنل انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کی تنظیم نو کا فیصلہ کیاگیا ہے، اس حوالے سے این آئی ٹی بورڈ کو خود مختار ادارہ بنایا جارہا ہے۔ راہداری منصوبہ پر ان کا کہنا تھا کہ مذاکرات کا ایک اور دور ہوگا۔6.8کلو میٹر طویل کرتار پور راہداری تعمیر کی جائے گی۔ اجلاس کے دوران میڈیا پر نشر ہونے والی خبر سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ اسد عمر بھائیوں کی طرح ہے، تلخ کلامی نہیں ہوئی۔ کابینہ میں تو اس طرح کی باتیں ہوتی رہتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  ملک بھر میں کرونا وائرس کی صورتحال لمحہ بہ لمحہ بدل رہی ہے