Asif ali

آصف علی کی ننھی پری

EjazNews

فیصل آباد سے تعلق رکھنے والے آصف علی اسلام آباد یونائیٹڈ کے کھلاڑی ہیں۔ اپنی دھوم دھار پرفارمنس سے انہوں نے شائقین کرکٹ کے دل جیت لیے۔ 27سالہ آصف بطور بلے باز اپنی پہچان بنانے میں کامیاب ہوئے۔ پی ایس ایل سیزن فور کے میچوں میں ان کی کارکردگی بہترین رہی۔لیکن بعض اوقات شائقین کو اندازہ ہی نہیں ہوتا کہ کھلاڑی اپنی ذاتی تکالیف کو پس پشت ڈال کر میدان میں ان کو تفریح فراہم کرنے کیلئے کوشاں ہوتے ہیں ،وہ اپنے اندر کے دکھ اور دردوں کو چھپائے ہوئے سامعین کو خوش کر رہے ہوتے ہیں۔ ایسا ہی پی ایس ایل فور میں اسلام آباد یونائیٹڈ کے ٹیم سے باہر ہو جانے کے بعد کہانی کا رخ منظر عام پر آیا۔ جب اسلام آباد یونائیٹڈ کے ڈین جونز اپنی پریس کانفرنس میں آصف علی کی بیٹی کی صحت کا ذکر کرتے ہوئے سب کو آبدیدہ کردیا ۔ آصف علی کی بیٹی کے ذکر پر ڈین جونز جذبات پر قابو نہ رکھ سکے اور پریس کانفرنس چھوڑ کر چلے گئے۔ان کی آنکھیں آنسوئوں سے بھری تھیں کیونکہ وہ اس کرب کو محسوس کر رہے تھے۔ اسلا م آباد یونائیٹڈ کے ڈائریکٹر اور بولنگ کوچ وقار یونس کا کہنا تھا آصف کی بیٹی کی بیماری کے بارے میں گزشتہ سال سے سن رہے ہیں ،ہسپتال سے بھی کوئی اچھی خبر نہیں آرہی۔ اس کے باوجود آصف میدان میں اپنی افادیت ثابت کرنے کیلئے کوشاں رہتے ہیں ان کے حوصلے کو داد دینا چاہیے۔ محمد آصف کی بیٹی کینسر کے موذی مرض میں مبتلا ہے ۔ پی ایس ایل کے اختتام پر چیئرمین پی سی بی احسان مانی نے نیوز کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہےکہ اسلام آباد یونائیٹڈ نے اپنا اسپرٹ آف دی سپورٹ ایوارڈ آصف کے نام کیا۔ آصف کی بیٹی کینسر سے جنگ لڑر ہی ہے۔ کھلاڑیوں کے جذبے کی قدر کرنی چاہیے، ان کی ہار اور جیت ہمارے لیے ہوتی ہے۔ ہماری ٹیم بھی محمد آصف کی بیٹی کے لیے دعا گو ہے اللہ ان کو صحت و تندرستی عطا فرمائے۔

یہ بھی پڑھیں:  بنگلہ دیش کی شاندار ترین فتح