چین نے مسعوداظہر کیخلاف قرارداد موخر کروادی

EjazNews

چین نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مولانامسعودا ظہر کو عالمی دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کرنے کی بھارتی کوششوں کو ایک مرتبہ پھر ناکام بنا دیا ہے۔ سلامتی کونسل میںامریکہ، فرانس اور برطانیہ کی جانب سے مولانامسعود اظہر کو دہشت گردوں کی فہرست میں شامل کرنے کے لئے قرار داد 27فروری کو پیش کی گئی تھی لیکن چین نے آخری لمحات میں اس پر اعتراض اٹھاتے ہوئے اسے چوتھی مرتبہ موخر کروادیا۔ چین کی جانب سے قرار داد کو موخر کروانے کا دورانیہ 6ماہ ہوگا اور اس میں مزید 3ماہ کا وقت لگ سکتا ہے ۔قبل ازیں چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان کا کہنا تھا کہ چین کی حکومت سکیورٹی کونسل میں اپنا ذمہ دارانہ کر دار ادا کرتی رہے گی۔
چینی وزارت خارجہ کے ترجمان لوکینگ کا کہنا تھاکہ چین ایک ذمہ دار رویہ اپنائے ہوئے ہے اور گفتگو میں بدستور شریک ہوگا۔ ان کا کہنا تھا کہ معاملے کا ذمہ دارانہ حل صرف بات چیت کے ذریعے ہی ممکن ہے۔ چینی وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایک سوال کے جواب میں عالمی برادری کو اس قسم کے مسائل اجاگر کرنے کے ساتھ ساتھ مسئلہ کشمیر کی جانب بھی توجہ دینے کا کہا۔ ان کا کہنا تھا کہ پابندی کمیٹی کی جانب سے کسی دہشت گرد کی حیثیت پر چین کا موقف اصولی اورو اضح ہے۔ چینی عہدیدار نے کہا صرف بات چیت کے ذریعے ہم مسائل کا ذمہ دارنہ حل نکال سکتے ہیں

یہ بھی پڑھیں:  کرکٹر آصف علی کی کمسن بیٹی انتقال کر گئیں